Monday , October 23 2017
Home / اضلاع کی خبریں / ویملواڑہ میں شدید گرمی سے زندگی اجیرن

ویملواڑہ میں شدید گرمی سے زندگی اجیرن

ویملواڑہ۔15اپریل ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) موسم گرما میں گرمی کی شدت سے عوام کا گھروں سے باہر نکلنا مشکل ہوگیا ہے اور ویملواڑہ میں گذشتہ سال سے اس سال گرمی کی شدت میں کافی اضافہ ہوا ہے اور اس کے علاوہ آس پاس کے منڈلوں میں کوئی بھی تالاب میں پانی کا قطرہ بھی نہیں ہے ۔ اس سے پینے کے پانی کیلئے کافی مشکلیں پیش آرہی ہیں ۔ امیر آدمی اپنے اپنے گھروں میں بورویل سے پانی کی پیاس بجھا رہے ہیں لیکن غریب عوام کو پینے کے پانی کیلئے ٹریکٹروں کے پیچھے اور بورویل کے پاس لائن میں کھڑے رہ کر پانی لینا پڑرہا ہے ۔ میونسپل اور گرام پنچایت کے ذریعہ پینے کا پانی تھوڑی دیر ہی دیا جارہا ہے ‘ اس سے بھی عوام کو کافی مشکلات پیش آرہی ہیں ۔ اس کے علاوہ ویملواڑہ چند اہم سنٹروں میں پولیس کی جانب سے اور آٹو یونین کی جانب سے آبدار خانہ کا افتتاح کیا جارہا ہے ۔ اس سے راہگیروں کو پینے کے پانی کی سہولت ہورہی ہے ۔ تجارتی پیشہ افراد دکانات بند کرنے کو ہی ترجیح دے رہے ہیں لیکن اس دفعہ چیف منسٹر کے سی آر کی جانب سے 24 گھنٹے بجلی کی فراہمی سے عوام کو پھر بھی گھروں میں آرام کرتے ہوئے چین کی سانس لے رہے ہیں ۔ پچھلے چار دنوں سے ویملواڑہ میں 43 ڈگری درجہ حرارت ہے ۔ حکومت کی جانب سے فصلوں کے اہم منڈلوں میں پینے کے پانی کے لئے آبدار خانے قام کرنا چاہیئے ۔ ویملواڑہ کی اہم شخصیت یونانی ڈاکٹر سید صادق نیحکومت سے مطالبہ کیا کہ دھوپ کی شدت زیادہ رہنے والے علاقوں میں آبدار خانوں کے قیام کے علاوہ ہیلت کیمپ منعقد کریں ۔

TOPPOPULARRECENT