Sunday , April 30 2017
Home / کھیل کی خبریں / ویمنس ہاکی ٹیم میں خود اعتمادی کا فقدان : کوچ

ویمنس ہاکی ٹیم میں خود اعتمادی کا فقدان : کوچ

طاقتور ٹیموں کے مقابلے ہندوستانی لڑکیوں میں کمزوری کا احساس
نئی دہلی۔ 16 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) ہاکی ورلڈ لیگ (راؤنڈ 2) کے ویسٹ وینکور میں منعقدہ فائنل میں ہندوستانی لڑکیوں نے اگرچہ بہترین کھیل کا مظاہرہ کرتے ہوئے خطاب جیت لیا ہے، اس طرح نتیجہ بہت اچھا رہا لیکن ہندوستانی ویمن ہاکی ٹیم کے کوچ مارین الجوئرڈ کا احساس ہے کہ اس ٹیم میں اپنے بعض اعلیٰ درجہ کے حامل حریفوں کے مقابلے خوداعتمادی کا فقدان ہے۔ یہ ایک ایسا مسئلہ ہے جس کو حل کرنے کیلئے وہ اپنی ٹیم کو مصروف رکھنا چاہتے ہیں۔ اسجوئرڈ گزشتہ ہفتہ اپنی ذمہ داری سنبھال چکے ہیں۔ وہ پہلی مرتبہ بحیثیت کوچ بیرونی ملک کی قومی ٹیم کیلئے خدمات انجام دے رہے ہیں۔ ہندوستانی ویمنس ہاکی ٹیم حال ہی میں ہاکی ورلڈ لیگ راؤنڈ 2 کا خطاب جیت کر ہاکی ورلڈ لیگ کے سیمی فائنل میں رسائی حاصل کرچکی ہے۔ اس طرح اگلا مرحلے اس کے لئے ورلڈ کپ کوالیفائر بھی ہوگا۔ 42 سالہ نئے کوچ اسجوترڈ نے ہالینڈ سے یہاں پی ٹی آئی کو دیئے گئے اپنے انٹرویو میں مزید کہا کہ ’’میں سمجھتا ہوں کہ ہندوستانی لڑکیوں میں خوداعتمادی کا فقدان ہے۔ بسااوقات وہ (ہندوستانی ویمنس ہاکی کھلاڑی) کھیل کے میدان میں اُترنے سے پہلے ہی میچ ہار جاتی ہیں۔ میرے خیال میں وہ کسی بڑے ملک کی ٹیم کے خلاف خود کو چھوٹا سمجھنے لگتی ہیں‘‘۔ انہوں نے مزید کہا کہ ’’اس مسئلہ کو حل کرنے کا ایک راستہ یہ بھی ہے کہ میں انہیں کھیل کے علاوہ خود اپنے اور اپنی ٹیم کے بارے میں سوچنے میں مصروف رکھنا چاہتا ہوں۔ چاہتا ہوں کہ دوسروں کے بارے میں نہ سوچیں کیونکہ دوسروں کے بارے میں سوچنے سے غلط خیالات کے ساتھ غلط نتائج برآمد ہوئے ہیں۔ میں چاہتا ہوں کہ وہ اپنے مقصد اور ہدف پر توجہ مرکوز کریں اور ممکنہ حد تک بہتر انداز میں اس کو پانے کی کوشش کریں‘‘۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT