Tuesday , October 24 2017
Home / ہندوستان / وینکیا نائیڈو کی پریس کانفرنس درہم برہم

وینکیا نائیڈو کی پریس کانفرنس درہم برہم

راجکوٹ 8 جون (سیاست ڈاٹ کام) کانگریس کارکنوں نے آج یہاں مرکزی وزیر ایم وینکیا نائیڈو کی پریس کانفرنس کو درہم برہم کردیا جس پر انھوں نے ردعمل ظاہر کرتے ہوئے یہ الزام عائد کیاکہ کانگریس ان ریاستوں میں گرفت کھوتے جارہی ہے جہاں پر وہ کبھی حکمراں تھی۔ سرکیوٹ ہاؤز میں مرکزی وزیر شہری ترقیات جیسے ہی پریس کانفرنس شروع کی بعض کانگریس کارکنوں بشمول راجکوٹ میونسپل کارپوریشن میں اپوزیشن لیڈر وسرام مگابھتا کانفرنس روم میں پہنچ کر ہنگامہ آرائی کردی جہاں پر کانگریس اور بی جے پی کارکنوں کے درمیان تلخ و تند بحث و تکرار ہوگئی۔ بعدازاں پولیس نے احتجاجی کارکنوں کو گرفتار کرلیا۔
جموں وکشمیر میں وقف اراضی پر فوج اور
دیگر فورسز کا غیرقانونی قبضہ
سری نگر، 8 جون (سیاست ڈاٹ کام) جموں وکشمیر میں 2710 کنال وقف اراضی پر فوج اور دیگر نیم فوجی دستوں جبکہ 3286 کنال اراضی پر سرکاری محکموں اور عام شہریوں کا غیر قانونی قبضہ ہے ۔ریاستی وزیر برائے حج و اوقاف فاروق احمد اندرابی نے بدھ کے روز یہاں قانون ساز کونسل میں ظفر اقبال منہاس کے ایک سوال کے تحریری جواب میں کہا کہ جموں وکشمیر میں 96 ہزار 650 کنال وقف اراضی ہے ۔اس میں سے 55014 کنال اور 16 مرلے وادی کشمیر جبکہ 41635 کنال اور 17 مرلے جموں خطہ میں ہیں۔ جواب میں کہا گیا ہے کہ اس اراضی میں سے اوقاف کی تحویل میں اس وقت 90653 کنال ایک مرلہ ہیں۔تاہم جواب میں کہا گیا ہے کہ 2710 کنال اور 16 مرلوں پر فوج اور دیگر نیم فوجی دستوں کا غیرقانونی قبضہ ہے جبکہ سرکاری محکموں اور عام شہریوں کے زیر تصرف بالترتیب 896 کنال اور 15 مرلے اور 2390 کنال اور ایک مرلہ ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مقبوضہ اراضی کو قانونی بنانے یا خالی کرانے کو یقینی بنانے کے لئے متعلقہ محکموں اور ایجنسیوں کے ساتھ فعال طریقے سے بات چیت جاری ہے ۔

TOPPOPULARRECENT