Friday , September 22 2017
Home / سیاسیات / ٹاملناڈو اسمبلی میں 20 ستمبر تک طاقت آزمائی نہیں ہوگی

ٹاملناڈو اسمبلی میں 20 ستمبر تک طاقت آزمائی نہیں ہوگی

ایم کے اسٹالن اور رکن اسمبلی ویٹریویل کی درخواست پر مدراس ہائیکورٹ کا عبوری حکمنامہ
چینائی 14 ستمبر ( سیاست ڈاٹ کام ) مدراس ہائیکورٹ نے آج حکم دیا کہ ٹاملناڈو اسمبلی میں 20 ستمبر تک طاقت آزمائی نہیں ہوگی ۔ جسٹس ایم دورائے سوامی نے ڈی ایم کے کے ورکنگ صدر ایم کے اسٹالن اور رکن اسمبلی پی ویٹریویل کی درخواست پر یہ عبوری حکمنامہ جاری کیا ۔ رکن اسمبلی ویٹریویل انا ڈی ایم کے سے خارج کردہ لیڈر ٹی ٹی وی دیناکرن کے کٹر حامی ہیں۔ دیناکرن کے حامی 19 ارکان اسمبلی کے خلاف نا اہل قرار دینے کا مقدمہ جاری ہے کیونکہ انہوں نے چیف منسٹر کے پانی سوامی کے خلاف بغاوت کی تھی ۔ اس مقدمہ کے پیش نظر درخواست گذاروں نے کہا کہ انہیں اندیشے ہیں کہ اسپیکر اسمبلی ان ارکان کو نا اہل قرار دے سکتے ہیں۔ ان کے بموجب اگر ایسا کیا جاتا ہے اور ایوان اسمبلی میں عددی طاقت آزمائی ہوتی ہے تو اس سے چیف منسٹر یا پلانی سوامی حکومت کو فائدہ ہوسکتا ہے ۔ اسٹالن نے ادعا کیا کہ پلانی سوامی حکومت ‘ 19 ارکان اسمبلی کی جانب سے مخالفت کے باعث اکثریت سے محروم ہوگئی ہے ۔ ویٹریویل نے اسی درخواست میں فریق بنتے ہوئے کہا کہ انہیں اندیشہ ہے کہ انہیں بھی اسپیکر کی جانب سے حکومت کے چیف وہپ کی درخواست پر شروع کی گئی کارروائی کی وجہ سے نا اہل قرار دیا جاسکتا ہے ۔ حکومت کے چیف وہپ نے 19 ارکان اسمبلی کو قانون انحراف کے تحت نا اہل قرار دینے کی درخواست پیش کی ہے ۔ اسپیکر نے ان ارکان اسمبلی کو نوٹسیں جاری کرتے ہوئے ان سے جواب طلب کیا ہے ۔ اس کا وقت آج ختم ہوا ہے ۔ قبل ازیں ریاست کے ایڈوکیٹ جنرل وجئے نارائن نے جج کو مطلع کیا تھا کہ اسپیکر نے ان کے خلاف دستوری عمل شروع کیا ہے اور عدالت کی جانب سے درخواست گذاروں کے محض اندیشوں پر کوئی حکمنامہ جاری نہیں کیا جاسکتا ۔ نارائن نے اپنے قبل ازیں جج کی ہدایت پر اپنے جواب میں یہ بات کہی ۔ جج نے ان سے کہا تھا کہ وہ اسپیکر سے معلوم کریں کہ آیا وہ اس مسئلہ پر کوئی حکمنامہ جاری کرنا چاہتے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT