Wednesday , September 27 2017
Home / سیاسیات / ٹاملناڈو اسپیکر اسمبلی کیخلاف تحریک عدم اعتماد پیش

ٹاملناڈو اسپیکر اسمبلی کیخلاف تحریک عدم اعتماد پیش

چیف منسٹر کے پلانی سوامی اعتماد کے ووٹ کے خلاف ڈی ایم کے کا اقدام

چینائی ۔21 فبروری ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) ٹاملناڈو اسمبلی میں اپوزیشن پارٹی ڈی ایم کے نے آج اسمبلی سکریٹری اے ایم پی جمال الدین کو ایک مکتوب پیش کرتے ہوئے اسپیکر پی دھنپال کے خلاف تحریک عدم اعتماد پیش کرنے کیلئے زور دیا ۔ ڈی ایم کے کا یہ اقدام پارٹی کے کارگذار صدر اور اسمبلی میں قائد اپوزیشن ایم کے اسٹالن کے اس بیان کے ایک دن بعد کیا گیا ہے جس میں کہا گیا تھا کہ اُن کی پارٹی 18 فبروری کو منعقدہ اعتماد کے ووٹ کے پس منظر میں اسپیکر کے خلاف تحریک عدم اعتماد لائے گی ۔ واضح رہے کہ چیف منسٹر ای کے پلانی سوامی نے اعتماد کا ووٹ 122-11 کے تناسب سے جیت لیا تھا ۔ یہاں پر سکریٹریٹ میں اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے ایم کے اسٹالن نے کہاکہ ہم نے اسپیکر دھنپال کے خلاف تحریک عدم اعتماد لانے کیلئے اسمبلی سکریٹری کو ایک مکتوب دیا ہے ۔ اس مکتوب کی نقل اسپیکر کو بھی پیش کی گئی ہے ۔ 18 فبروری کے سیشن کے دوران اسپیکر نے یکطرفہ کارروائی کے ساتھ اعتماد کے ووٹ کو کامیاب کرنے کی کوشش کی ۔ اس بنیاد پر ان کے خلاف تحریک اعتماد پیش کرنا ضروری ہوجاتا ہے کیونکہ ایوان میں ارکان کو ان پر کوئی اعتماد نہیں رہا ہے ۔ ہم نے ان کے خلاف عدم تحریک اعتماد پیش کرنے کی درخواست کی ہے ۔ اسٹالن نے کل کہا تھا کہ اپوزیشن پارٹی کی اہمیت کو گھٹانے کی کوشش کی جارہی ہے ۔ اسپیکر کا رول ایوان کے اندر جانبدارانہ دکھائی دیا ۔ دھنپال پر الزام عائد کیا گیا کہ انھوں نے دانستہ طورپر اپنی برادری کی لوگوں کی مدد کی ہے ۔ اُن کا یہ بیان ہفتہ کے دن دھنپال کے اس الزام کے جواب میں سامنے آیا ہے کہ پلانی سوامی کو اعتماد کا ووٹ حاصل کرنے کیلئے جدوجہد کرنی پڑی تھی ۔ انھوں نے اس تناظر میں ایوان کے اندر ہونیو الی ہنگامہ آرائی اور ایک خاص طبقہ کی جانب سے شوروغل مچانے کے دوران ڈی ایم کے کو نشانہ بنایاتھا ۔ اسٹالن نے مزید کہا کہ جب ہم دیکھ رہے تھے کہ اسپیکر نے خود اپنے طبقہ کے لوگوں کا ساتھ دے رہے ہیں تو اس پر ہمیں شدید افسوس ہوا ۔ یہ شرم کی بات ہے ۔ ٹاملناڈو کی تہذیب میں یہ ہرگز شامل نہیں ہے ، لہذا ہمیں اسپیکر اسمبلی پر قطعی اعتماد نہیں ہے ۔ انھوں نے اپنے 34 ارکان اسمبلی کی دستخط پر مشتمل مکتوب میں دھنپال کے خلاف تحریک لانے پر زور دیا۔ اسمبلی کے قواعد کے مطابق یہ تحریک 15 دن کے اندر پیش کی جانی چاہئے ۔

TOPPOPULARRECENT