Friday , September 22 2017
Home / شہر کی خبریں / ٹرانسپورٹ خدمات پر اجلاس ‘ مرحوم افسر خان کی شرکت

ٹرانسپورٹ خدمات پر اجلاس ‘ مرحوم افسر خان کی شرکت

محکمہ اطلاعات کے پریس نوٹ کی غلطی ۔ اجلاس میں مختلف امور پر غور
حیدرآباد 21 مارچ (سیاست نیوز) وزیر ٹرانسپورٹ مسٹر پی مہندر ریڈی کی جانب سے جی ایچ ایم سی حدود میں ٹرانسپورٹ خدمات کی فراہمی کے متعلق طلب کردہ ارکان اسمبلی کے اجلاس میں جناب افسر خان رکن اسمبلی کاروان نے شرکت کی ۔جی ہاں! حکومت کے محکمہ اطلاعات و تعلقات عامہ کے تحت موجود پبلسٹی سیل نے اجلاس کے متعلق جو تفصیلات روانہ کی ہیں اس کے مطابق اس اہم ترین اجلاس میں مرحوم رکن اسمبلی نے نہ صرف شرکت کی بلکہ اپنے حلقہ کی ترقی اور سیاحتی مقامات تک بس سروس کیلئے نمائندگی بھی کی۔ گذشتہ دنوں قائد مقننہ مجلس پارٹی اکبر الدین اویسی نے ایوان میں شہر بالخصوص پرانے شہر میں آر ٹی سی کی بس خدمات کو بہتر بنانے کا مطالبہ کیا تھاجس پر وزیر نے شہر کے ارکان اسمبلی کا اجلاس طلب کرنے کا اعلان کیا تھا جو آج اسمبلی میں منعقد ہوا۔ اجلاس میں اکبر الدین اویسی قائد مقننہ مجلس موجود نہیں تھے لیکن مرحوم رکن اسمبلی جناب افسر خان کی اجلاس میں موجودگی اور نمائندگی کی اطلاع محکمہ اطلاعات و تعلقات عامہ نے دی ۔ اجلاس میں وزیر ٹرانسپورٹ مسٹر پی مہندر ریڈی کے علاوہ ڈپٹی چیف منسٹر جناب محمد محمود علی‘ مسٹر این نرسمہاریڈی وزیر داخلہ‘ مسٹر ٹی سرینواس یادو وزیر افزائش مویشیاں ‘ مسٹرپدما راؤ گوڑ وزیر آبکاری‘ صدرنشین آر ٹی سی ایس ستیہ نارائنہ کے علاوہ مجلس‘ بی جے پی‘ تلگودیشم اور ٹی آر ایس کے ارکان اسمبلی نے شرکت کی۔مجلسی ارکان نے بندلہ گوڑہ آر ٹی اے آفس کو الحاج سلطان صلاح الدین اویسی مرحوم کے نام سے موسوم کرنے کا مطالبہ کیا جس پر وزراء نے غور کرنے کا تیقن دیا۔ ارکان اسمبلی نے یاقوت پورہ‘ ملک پیٹ‘ نامپلی‘ کاروان و دیگر علاقوں میں بس سروس کے آغاز کی خواہش کی اور کہا کہ جن علاقو ں میں بس سروس کی گنجائش نہیں ہے وہاں منی بس کی شروعات کی جائے۔علاوہ ازیں ارکان نے آرٹی سی بسوں پر اردو سائن بورڈ آویزاں کرنے اور پرانے شہر میں خواتین کیلئے مخصوص بس خدمات کے اضافہ پر زور دیا۔ محکمہ اطلاعات و تعلقات عامہ کے پریس نوٹ میں بتایا گیا کہ ارکان نے شہر کے سیاحتی مراکز کو آر ٹی سی خدمات سے مربوط کرنے کا مشورہ دیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT