Monday , August 21 2017
Home / Top Stories / ٹرمپ ریمارک، ہندوستانی ٹیم کی آسٹریلیائی میڈیا پر تنقید

ٹرمپ ریمارک، ہندوستانی ٹیم کی آسٹریلیائی میڈیا پر تنقید

دھرم شالہ۔23 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) آسٹریلیائی میڈیا کی جانب سے ہندوستانی کرکٹ ٹیم کے کپتان ویراٹ کوہلی کو کھیلوں کے ڈونالڈ ٹرمپ کہے جانے پر چٹیشور پوجارا نے ہندوستانی ٹیم کی جانب سے آسٹریلیائی میڈیا پر شدید تنقید کی ہے۔ پوجارا جنہوں نے رانچی ٹسٹ میں شاندار ڈبل سنچری اسکور کرتے ہوئے ہندوستانی ٹیم کو آسٹریلیا کے خلاف نازک صورتحال سے باہر نکالتے ہوئے مستحکم موقف میں لاکھڑا کیا تھا، یہاں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے پوجارا نے کہا کہ آسٹریلیائی میڈیا نے جس طرح ہندوستانی کپتان کے متعلق خبر شائع کی ہے، وہ مایوس کن ہے۔ ہم تمام مکمل طور پر ویراٹ کوہلی کی حمایت کرتے ہیں جو کہ کرکٹ کے ایک بہترین سفیر ہے۔ پوجارا نے مزید کہا کہ توجہ پھر ایک مرتبہ کرکٹ سے ہٹ کر دوسری چیزوں پر مرکوز ہوچکی ہے اور یہ نہیں ہونا چاہئے کیوں کہ ہم تمام اپنی تمام تر توجہ کرکٹ پر مرکوز کرچکے ہیں۔ پوجارا جو کہ اوپنر کے ایل راہول کے ساتھ آسٹریلیا کے خلاف رواں سیریز میں استقلال کے ساتھ مظاہرہ کررہے ہیں لیکن سیریز میں بہترین کرکٹ کے ساتھ دونوں ٹیموں کے کھلاڑیوں کے درمیان فقرے بازی، ایک دوسرے کی نقل اور تنازعات بھی عروج پر ہیں جس میں مہمان کپتان اسٹیون سمتھ کا ڈی آر ایس تنازعہ سب سے نمایاں ہے۔ آسٹریلیائی میڈیا کی جانب سے ویراٹ کوہلی کو کھیل کا ڈونالڈ ٹرمپ قرار دیتے ہوئے ان پر پھر ایک مرتبہ تنقید کی گئی ہے جبکہ کرکٹ آسٹریلیا کے صدر جیم سدرلینڈ نے بھی ان تنازعات میں اضافہ کرتے ہوئے ویراٹ کوہلی کے متعلق یہ کہا ہے کہ شاید وہ معافی کے ہجے بھی نہیں جانتے۔ آسٹریلیائی میڈیا اور دیگر افراد کی جانب سے جہاں ویراٹ کوہلی کو مسلسل تنقیدوں کا نشانہ بنایا جارہا ہے وہیں آسٹریلیائی ٹیم کے سابق کپتان مائکل کلارک نے یہ واضح کرنے کی کوشش کی ہے کہ دو یا تین صحافی ہندوستانی کپتان کی ساکھ کو متاثر کررہے ہیں لیکن اس طرح کی ہرکتوں سے کوہلی پر اثر نہیں پڑے گا۔پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے جہاں پوجارا نے آسٹریلیائی میڈیا کی مخالفت میں بیان دینے کے علاوہ اپنے کپتان ویراٹ کوہلی کی مکمل ٹیم کی جانب سے حمایت بھی کی اور کہا کہ ان حالات میں ٹیم کے سارے کھلاڑی اپنے کپتان کے ساتھ کھڑے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT