Wednesday , August 23 2017
Home / شہر کی خبریں / ٹی آر ایس حکومت آبپاشی پراجکٹس تعمیر کرنے کی پابند

ٹی آر ایس حکومت آبپاشی پراجکٹس تعمیر کرنے کی پابند

اپوزیشن پر رکاوٹیں پیدا کرنے کا الزام ، پی راجیشور ریڈی ایم ایل سی کا بیان
حیدرآباد ۔ 5 ۔ اگست : ( آئی این این ) : ٹی آر ایس کے ایم ایل سی پی راجیشور ریڈی نے اپوزیشن جماعتوں پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ہائی کورٹ کے فیصلہ پر جس میں جی او 123 کو برخاست کیا گیا ہے ، اپوزیشن کا خوشی منانا ان کی افسردگی کو ظاہر کرتا ہے ۔ آج یہاں میڈیا کے نمائندوں سے مخاطب کرتے ہوئے ٹی آر ایس قائد نے کہا کہ ریاستی حکومت نے اس بات کو یقینی بنایا ہے کہ قانون حصول اراضی 2013 کے خطوط پر پراجکٹ کے باعث اراضیات سے محروم ہونے والوں کو ان کی اراضیات کے لیے پورا معاوضہ حاصل ہو ۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے یہ بات کسانوں پر چھوڑ دی کہ آیا وہ قانون حصول اراضی 2013 یا جی او 123 کے تحت ان کے معاوضہ کو حاصل کریں ۔ حکومت نے پراجکٹ کے باعث بیدخل ہونے والوں کو امکنہ پلاٹس اور روزگار بھی فراہم کرنے کا وعدہ کیا ہے ۔ اس کے باوجود اپوزیشن جماعتیں جھوٹ کے ذریعہ کسانوں کو گمراہ کررہی ہے ۔ ٹی آر ایس قائد نے الزام عائد کیا کہ تلگو دیشم پارٹی ریاست تلنگانہ کے مفادات کے خلاف کام کررہی ہے اور ریاستی حکومت کے ہر اچھے کام کی مخالفت کررہی ہے ۔ ٹی آر ایس حکومت تمام رکاوٹوں کو دور کرے گی اور آبپاشی پراجکٹس کی تعمیر کرے گی جس سے آبپاشی کا مسئلہ حل ہوگا ۔ راجیشور ریڈی نے مشن بھگیرتا کی مخالفت کرنے پر کانگریس کو اپنی شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ اس پراجکٹ کے لیے جس کا مقصد ریاست میں ہر گھر کو پائپ لائن کے ذریعے پینے کا پانی فراہم کرنا ہے ، قومی اداروں ، این آئی ٹی آئی آیوگ ، نبارڈ سے مدد حاصل ہوئی ہے ۔ انہوں نے کانگریس قائدین کو مشورہ دیا کہ ریاست کی ترقی میں رکاوٹیں پیدا نہ کریں ۔۔

TOPPOPULARRECENT