Wednesday , May 24 2017
Home / شہر کی خبریں / ٹی آر ایس حکومت خواتین کو خود مختار بنانے میں ناکام

ٹی آر ایس حکومت خواتین کو خود مختار بنانے میں ناکام

کے سی آر کے بلند بانگ دعویٰ کھوکھلے ، صدر پردیش کانگریس اتم کمار ریڈی کا بیان
حیدرآباد ۔ 7 ۔ مارچ : ( سیاست نیوز ) : صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی کیپٹن اتم کمار ریڈی نے خواتین کو خود مختار بنانے میں ناکام ہوجانے کا ٹی آر ایس حکومت پر الزام عائد کیا ۔ آج میڈیا کو جاری کردہ ایک بیان میں کیپٹن اتم کمار ریڈی نے بتایا کہ چیف منسٹر کے سی آر خواتین کی ترقی و بہبود کے معاملے میں بلند بانگ دعوے کرتے ہیں مگر حقائق سے اس کا کوئی تعلق نہیں ہے ۔ تلنگانہ کابینہ میں ایک خاتون کو بھی شامل نہ کرتے ہوئے خواتین سے کتنی ہمدردی ہے اس کا ثبوت دے دیا ہے ۔ کے سی آر کو خواتین کی صلاحیتوں پر بھروسہ نہیں ہے ۔ ریاست کی جملہ آبادی میں 49 فیصد تناسب رکھنے والی خواتین کو کابینہ میں یکسر نظر انداز کردیا گیا ہے جس کی کانگریس پارٹی سخت مذمت کرتی ہے ۔ انہوں نے صدر کانگریس مسز سونیا گاندھی کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ایک خاتون نے علحدہ تلنگانہ ریاست تشکیل دینے میں اہم رول ادا کیا ۔ لیکن افسوس کی بات ہے ٹی آر ایس نے حکومت کی حصہ داری میں خواتین کو نظر انداز کردیا ۔ صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی نے ارکان قانون ساز کونسل میں بھی خواتین کو نظر انداز کرنے کا بھی چیف منسٹر پر الزام عائد کیا ۔ جب کہ کانگریس پارٹی نہ صرف خواتین کو خود مختار بنانے کی حامی ہے ۔ کانگریس کے دور حکومت میں 5 خواتین ریاستی کابینہ میں شامل تھی کونسل میں بھی واحد خاتون کانگریس کی نمائندہ اے للیتا ہے ۔ کانگریس نے صدر جمہوریہ اور اسپیکر لوک سبھا کے عہدوں پر بھی خواتین کو نمائندگی دی تھی ۔ کیپٹن اتم کمار ریڈی نے عالمی یوم خواتین کے موقع پر تلنگانہ کی خواتین کو تحفے پیش کرنے کے بجائے چیف منسٹر کی جانب سے بورڈ و کارپوریشن کے عہدوں پر خواتین کے تقررات کے لیے تین رکنی کمیٹی تشکیل دینے تک اکتفا کرنے پر بھی سخت تنقید کرتے ہوئے کہا کہ حکومت خواتین کو خود مختار بنانے کے معاملے میں سنجیدہ نہیں ہے ۔ حکومت کی نصف میعاد مکمل ہونے پر خواتین کی کمیٹی تشکیل دیتے ہوئے ٹال مٹول کی پالیسی اپنائی جارہی ہے ۔ صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی نے خواتین کی فلاح و بہبود کی اسکیمات پر بھی عمل آوری نہ ہونے کا الزام عائد کیا اور چیف منسٹر سے مطالبہ کیا کہ وہ فوری اپنی کابینہ میں خواتین کو شامل کریں اور ساتھ ہی بورڈ اور کارپوریشن پر آبادی کے تناسب سے انہیں نمائندگی پیش کریں گے ۔۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT