Tuesday , September 26 2017
Home / شہر کی خبریں / ٹی آر ایس کی فلاحی اسکیمات سے کانگریس بوکھلاہٹ کا شکار

ٹی آر ایس کی فلاحی اسکیمات سے کانگریس بوکھلاہٹ کا شکار

کانگریس کے دور میں ہی شمس آباد کے ساتھ ناانصافی ہوئی : چندرا ریڈی
شمس آباد ۔ 14 جولائی (سیاست نیوز) شمس آباد کے موضع شاہ پور میں ٹی آر ایس قائدین نے پریس میٹ منعقد کرتے ہوئے کانگریس کے بیانات کو جھوٹ قرار دیا۔ چندرا ریڈی ٹی آر ایس منڈل صدر نے کہا کہ کانگریس پارٹی ٹی آر ایس حکومت کو بدنام کرنے کیلئے جھوٹے بیانات دیکر عوام کوگمراہ کرنے کی کوشش کررہی ہے۔ ٹی آر ایس اقتدار پر آنے کے تین سال میں صرف شمس آباد منڈل کیلئے ہی کروڑہا روپئے خرچ کئے اور ہر گرام پنچایت کو فنڈس منظور کررہی ہے۔ کرشنا ندی کے پانی کیلئے ٹی آر ایس حکومت نے ہی 13 کروڑ روپئے منظور کئے۔ شمس آباد میں بس ڈپو قائم ہونے والا تھا جسے سابق ہوم منسٹر نے مہیشورم کو منتقل کیا جب وہ ہوم منسٹر تھیں انہیں شمس آباد کی ترقی کا خیال نہیں آیا۔ کانگریس کے اقتدار میں GO111 پر کوئی کارروائی نہیں کی گئی۔ صرف ٹی آر ایس کو بدنام کرنے کیلئے GO111 کا مسئلہ کو اٹھایا جارہا ہے۔ GO111 کیلئے ایک خصوصی کمیٹی تشکیل دی گئی ہے اور بہت جلد اس کی کارروائی بھی شروع ہوگی۔ سبیتا اندرا ریڈی اور کانگریس قائدین پرکاش گوڑ رکن اسمبلی کو نشانہ بناتے ہوئے بے جا الزامات عائد کررہے ہیں۔ زیڈ پی ٹی سی ممبرستش نے ضلع پریشد فنڈ سے دو کروڑ سے زائد رقم منظور کرواتے ہوئے منڈل کے مختلف مقامات میں ترقیاتی کام انجام دیئے اور وہ کانگریس میٹنگ میں ٹی آر ایس کو بدنام کررہے ہیں۔ شمس آباد میںکرشنا ندی کا پانی پرکاش گوڑ کی خصوصی دلچسپی اور کوششوں سے آیا ہے جس کا سہرا شمس آباد سرپنچ اپنے سر لے رہے ہیں۔ فنڈ ٹی آر ایس سے حاصل کرکے ترقیاتی کام انجام دیئے جارہے ہیں اور بدنام بھی ٹی آر ایس کو ہی کیا جارہا ہے۔ تین سال میں شمس آبادمیں 80 کروڑ روپئے صرف شمس آباد منڈل کو منظور ہوئے۔ مشن بھگیرتا کے تحت 19 کروڑ 50 لاکھ روپیوں کے ذریعہ پورے منڈل میں پائپ لائن ڈالا جارہا ہے۔ کانگریس کو چاہئے کہ وہ ترقیاتی کاموں کی ستائش کرتے ہوئے تنقیدوں پر روک لگائے۔ ایم کے نجم الدین ایم پی ٹی سی ممبر نے کہاکہ سابق ہوم منسٹر سبیتا اندرا ریڈی نے ان کے دور میں شمس آباد پولیس اسٹیشن کے اطراف کی ایک بھی روڈ نہیں ڈالیں اور اب حکومت کوبدنام کررہی ہیں۔ کانگریس کے دور میں مسائل میں اضافہ ہی ہوا تھا۔ ٹی آر ایس حکومت تمام شعبوں میں ترقی کیلئے کام کررہی ہے خاص کر تعلیمی میدان میں ریسیڈنشیل اسکولس قائم کرکے طلباء کو مفت تعلیم فراہم کی جارہی ہے۔ اس موقع پر منڈل کے ٹی آر ایس سرپنچس و ایم پی ٹی سی ممبرس کے علاوہ قائدین بھی موجود تھے۔

TOPPOPULARRECENT