Friday , September 22 2017
Home / شہر کی خبریں / پارلیمانی حلقہ نلگنڈہ اور حلقہ اسمبلی مکتھل میں ضمنی انتخابات کی قیاس آرائیاں

پارلیمانی حلقہ نلگنڈہ اور حلقہ اسمبلی مکتھل میں ضمنی انتخابات کی قیاس آرائیاں

سکھیندرریڈی اور موہن ریڈی کو استعفیٰ کی ترغیب ‘ کانگریس کو مزید کمزور بنانے ٹی آر ایس کی حکمت عملی
حیدرآباد ۔ 11ستمبر ( سیاست نیوز) چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر ‘ ٹی آر ایس کے سیاسی طاقت کا مظاہرہ کرنے اور اصل اپوزیشن کانگریس کو مزید کمزور کرنے کیلئے حلقہ لوک سبھا نلگنڈہ اور اسمبلی حلقہ مکتھل کے کانگریس سے ٹی آر ایس میں شامل ہونے والے عوامی منتخب نمائندوں کو استعفی دلاتے ہوئے ان دونوں حلقوں پر ضمنی انتخابات کرانے کی تیاریاں کررہے ہیں ؟ ذرائع سے پتہ چلاہیکہ رکن پارلیمنٹ جی سکھیندر ریڈی اور رکن اسمبلی سی رام موہن ریڈی کسی بھی وقت استعفی دے سکتے ہیں ۔ ضمنی انتخابات کی چمپئن رہنے والی ٹی آر ایس ہیں یہ قیاس آرائیاں زوروں پر چل رہی ہیں کہ بہت جلد تلنگانہ میں دو حلقوں پر ضمنی انتخآبات ہوسکتے ہیں ۔ عموماً ضمنی انتخابات میں حکمراں جماعت کا پلہ بھاری رہتا ہے ۔ تلنگانہ کے دو لوک سبھا اور دو اسمبلی حلقوں کے ضمنی انتخابات کے نتائج تلنگانہ کے لوک سبھا اور دو اسمبلی حلقوں کے ضمنی انتخابات کے نتائج اس بات کا ثبوت ہے جہاںٹی آر ایس کے امیدواروں نے بھاری اکثریت سے کامیابی حاصل کی ہے ۔ باوثوق ذرائع سے پتہ چلا ہیکہ چیف منسٹر کے سی آر کی جانب سے کرایا گیا تیسرا سروے حکمراں ٹی آر ایس کیلئے چونکا دینے والا ثابت ہوا ہے ‘ کئی وزراء کے بشمول حکمراں جماعت کے ارکان اسمبلی کا موقف نازک ہونے کے اشارے ملے ہیں جسکا چیف منسٹر سنجیدگی سے جائزہ لے رہے ہیں ۔ پارٹی کیڈر میں جوش و خروش بھرنے کیلئے نلگنڈہ لوک سبھا اورا سمبلی حلقہ مکتھل ضلع محبوب نگر کے ارکان کو استعفی دلانے کی تیاری کررہے ہیں تاکہ ٹی آر ایس کی سیاسی طاقت کا مظاہرہ کیا جاسکے ۔ سارے تلنگانہ میں متحدہ نلگنڈہ اور محبوب نگر ایسے اضلاع ہیں جہاں سے کانگریس کے پانچ سے زائد ارکان اسمبلی منتخب ہوئے تھے اور انہیں اضلاع سے کانگریس کو امیدیں وابستہ ہیں ۔ ضلع نلگنڈہ کی صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی اُتم کمار ریڈی اورقائد اپوزیشن کے جانا ریڈی نمائندگی کرتے ہیں ۔ نلگنڈہ کے ضمنی انتخاب میں کامیابی حاصل کرتے ہوئے چیف منسٹر کانگریس کو دھکا پہنچانے کی منصوہ بندی تیار کررہے ہیں ۔ کومٹ ریڈی برادرس کی کانگریس قیادت سے ہونیوالی اندرونی جنگ کا بھی فائدہ اٹھانا چاہتے ہیں ۔ باوثوق ذرائع سے پتہ چلا ہیکہ رکن پارلیمنٹ جی سکھیندر ریڈی کو چیف منسٹر کے سی آر کابینی درجہ دیتے ہوئے کسان سمیتیوں کا کنوینر نامزد کرنا چاہتے ہیں ۔ چیف منسٹر نے یہ بات جی سکھیندر ریڈی کو بتادی ہے۔

 

TOPPOPULARRECENT