Monday , September 25 2017
Home / سیاسیات / پارلیمنٹ تعطل پر اپوزیشن سے مشاورت کا مطالبہ

پارلیمنٹ تعطل پر اپوزیشن سے مشاورت کا مطالبہ

نئی دہلی۔/11ڈسمبر، ( سیاست ڈاٹ کام ) پارلیمنٹ میں آج بھی شور شرابہ اور ہنگامہ کے مناظر کے باعث ایوان کی کارروائی کو ایک سے زائد مرتبہ ملتوی کردینا پڑا جبکہ جنتا دل متحدہ  نے الزام عائد کیا کہ بعض وزراء تحکمانہ انداز اختیار کئے ہوئے ہیں اور حکومت سے مطالبہ کیا کہ اپوزیشن سے مشاورت کرتے ہوئے جاریہ تعطل کے مسئلہ کا حل تلاش کرے۔پارٹی ترجمان مسٹر کے سی تیاگی نے پارلیمنٹ کے باہر میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ حکمران جماعت کو چاہیئے کہ تعطل ختم کرنے کیلئے اپوزیشن سے مشاورت کرے تاکہ مسئلہ کا کوئی نہ کوئی حل تلاش کیا جاسکے۔’ نیشنل ہیرالڈ‘ کیس میں صدر کانگریس سونیا گاندھی اور نائب صدر راہلو گاندھی کو سمن جاری کرنے پر انتقامی سیاست قرار دیتے ہوئے کانگریس اور دیگر اپوزیشن جماعتوں نے آج چوتھے دن بھی راجیہ سبھا میں ہنگامہ برپا کردیا جس کے باعث ایوان کی کارروائی کو وقفہ وقفہ سے ملتوی کردیا گیا۔ مسٹر تیاگی نے کہا ہم چاہتے ہیں کہ پارلیمنٹ کی کارروائی چلائی جائے لیکن بعض وزرائکی ہٹ دھرمی اور ضدی رویہ کے باعث ایوان کو سہل اندا ز میں چلنے میں رکاوٹ پیدا ہورہی ہے۔ پارلیمنٹ کی کارروائی پر عوامی رقومات ضائع ہوجانے کے سوال پر انہوں نے کہا کہ اگرچیکہ میں بھی پارلیمنٹ کی کارروائی پر رقومات ضائع ہوجانے پر فکر مند ہوں لیکن اس سے زیادہ غریب کسانوں کے نقصانات تشویشناک ہے جوکہ اقل ترین امدادی قیمتوں سے محروم ہیں۔

TOPPOPULARRECENT