Tuesday , October 17 2017
Home / شہر کی خبریں / پارلیمنٹ میں جنوبی ہند کے ساتھ امتیازی سلوک

پارلیمنٹ میں جنوبی ہند کے ساتھ امتیازی سلوک

بی جے پی قائد کے ریمارک پر رکن پارلیمنٹ کے کویتا کا اظہار برہمی
حیدرآباد۔ 10 اپریل (سیاست نیوز) ٹی آر ایس رکن پارلیمنٹ کویتا نے کہا کہ ہندی زبان بولنے والوں اور شمالی ہند والوں کو پارلیمنٹ میں اہمیت دی جاتی ہے۔ انہوں نے جنوبی ہند کے شہریوں کے بارے میں بی جے پی کے سابق ایم پی کے ریمارکس کو افسوسناک قرار دیا۔ کویتا نے کہا کہ بی جے پی کے سابق ایم پی اگرچہ معذرت خواہی کرتے ہوئے تنازعہ کو ختم کیا ہے، لیکن اس طرح کے ریمارکس مناسب نہیں ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کسی علاقہ کے عوام کو ان کے رنگ کی بنیاد پر نشانہ بنانے سے متعلق بیانات سے بیان دینے والا کا وقار گھٹ جاتا ہے اور اس سے جن کے خلاف ریمارکس کئے گئے، ان پر کوئی اثر نہیں پڑتا۔ انہوں نے کہا کہ شمالی ہند کے ایم پیز کی تعداد اور عوام کی تعداد بھی زیادہ ہے اور وزیراعظم کے عہدہ پر فائز شخصیتوں میں زیادہ تر افراد کا تعلق شمالی ہند سے رہا، جس کے باعث جنوبی ہند کے ساتھ اس طرح کا امتیازی سلوک روا رکھا جاتا ہے۔ انہوں نے علاقائی جماعتوں کو مستحکم کرنے کی ضرورت پر زور دیا اور کہا کہ علاقائی جماعتوں کے قیام کے بعد علاقائی عوام کے مسائل، مرکزی حکومت تک پہنچ پائے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT