Sunday , June 25 2017
Home / شہر کی خبریں / پاسپورٹ قواعد میں نرمی کے بعد درخواستوں میں ریکارڈ اضافہ

پاسپورٹ قواعد میں نرمی کے بعد درخواستوں میں ریکارڈ اضافہ

آئندہ دنوں میں درخواستیں بڑھنے کا امکان ، ضلعی پاسپورٹ دفاتر سے درخواستوں کی وصولی کی تجویز
حیدرآباد۔15فروری(سیاست نیوز) پاسپورٹ قواعد میں نرمی کے بعد ملک بھر میں پاسپورٹ کے حصول کیلئے کوشاں افراد میں خوشی کی لہر دوڑ گئی اور جاریہ سال کے دوران پاسپورٹ حاصل کرنے والوں کی تعداد میں 30فیصد کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے۔وزارت خارجہ کی جانب سے سال 2016میں لائی گئی پاسپورٹ قوانین میں نرمی کے بعد اس بات کی خوب تشہیر ہوئی اور دستاویزات میں یکسانیت نہ ہونے کے سبب مشکلات کا شکار شہری جو پاسپورٹ کے حصول کیلئے درخواستیں داخل کرنے سے خائف تھے اب ان لوگوں نے درخواستیں داخل کرتے ہوئے پاسپورٹ حاصل کرنے شروع کردیئے ہیں جس کے سبب جاریہ سال کے اوائل میں ہی پاسپورٹ کے حصول کے خواہشمندوں کی تعداد میں زبردست اضافہ ریکارڈ کیا جا نے لگا ہے۔بتایا جاتا ہے کہ 7فروری کو ملک بھر میں 53 ہزار 400شہریوں نے حصول پاسپورٹ کیلئے درخواستیں داخل کی ہیں جن میں 49ہزار 259نئے پاسپورٹ کیلئے داخل کی گئی درخواستیں ہیں۔مرکزی وزارت خارجہ کے ترجمان مسٹر وکاس سوروپ کے بموجب پاسپورٹ سیوا پراجکٹ کے آغاز کے بعد سے اب تک کا یہ سب سے بڑا نمبر ہے اور توقع کی جا رہی ہے کہ آئندہ دنوں میں پاسپورٹ کے حصول کے خواہشمندوں کی تعداد میں مزید اضافہ ہوگا اور لوگ اس اہم دستاویز کے حصول میں غفلت نہیں کریں گے۔بتایا جاتا ہے کہ وزارت خارجہ کی جانب سے پاسپورٹ قوانین میں لائی گئی 8تبدیلیوں کے بعد کئی لوگ جن کے پاس صداقت نامہ پیدائش نہیں تھا ان لوگوں نے بھی مختلف صداقت ناموں اور شواہد کی بنیاد پر درخواستیں داخل کرنی شروع کردی ہیں اسی طرح متبنی کیلئے قوانین میں نرمی کے علاوہ سرکاری ملازمین کو پاسپورٹ کے حصول میں نرمی کے فیصلہ نے اچانک تعداد میں اضافہ کردیا ہے۔عہدیداروں کے بموجب جاریہ سال کے دوران نئے پاسپورٹ درخواست گذاروں کی تعداد میں مزید اضافہ ہوسکتا ہے اسی لئے مرکزی وزارت خارجہ کی جانب سے شہری علاقوں کے ساتھ ساتھ دیہی علاقوں تک پاسپورٹ سیوا پراجکٹ کو فروغ دینے کی منصوبہ بندی کی جا رہی ہے اور بہت جلد ضلعی پوسٹ آفس کے ذریعہ پاسپورٹ درخواستوں کے ادخال کے متعلق بھی قطعی فیصلہ کا امکان ہے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT