Friday , October 20 2017
Home / عرب دنیا / پانچ سالہ نابینا بچے نے ریڈیو پر سماعت کرکے مکمل قرآن حفظ کرلیا

پانچ سالہ نابینا بچے نے ریڈیو پر سماعت کرکے مکمل قرآن حفظ کرلیا

جدہ ۔ 18 اگست (سیاست ڈاٹ کام) پانچ سالہ حسین محمد طاہر نے وہ کارنامہ انجام دیا ہے جو کسی عام آدمی کے بس کی بات نہیں۔ نابینا ہونے کے باوجود اس نے صرف ریڈیو پر قرآن مجید کی تلاوت سماعت کرتے کرتے مکمل قرآن حفظ کرلیا۔ میانمار کے ساکن طاہر کا یہ سفر جدہ سے شروع ہوتا ہے جہاں اس کے والد برسرکار تھے۔ چونکہ انہیں پتہ تھا کہ نابینا ہونے کی وجہ سے طاہر ٹیلیویژن نہیں دیکھ سکے گا لہٰذا انہوں نے اسے ریڈیو خرید کر دیا۔ اس طرح انہوں نے ریڈیو پر ایک مستقل فریکوئنسی کو سیٹ کردیا جہاں سے 24 گھنٹے صرف قرآن مجید کی تلاوت نشر کی جاتی تھی۔ طاہر کے والد کو یقین تھا کہ قرآن مجید کی تلاوت مسلسل سماعت کرتے ہوئے ان کا بیٹا مقدس کتاب کو مکمل طور پر حفظ کرے گا اور اللہ کی مرضی سے ہوا بھی ایسا ہی! طاہر کے والد کو تین سالوں تک یہ احساس ہی نہیں ہوا کہ ان کا بیٹا قرآن حفظ کرتا جارہا ہے۔ پتہ اس وقت چلا جب وہ لوگ جدہ سے مدینہ منورہ منتقل ہوئے اور بیٹے نے مسجد نبوی ؐ میں نماز ادا کرنے کی خواہش ظاہر کی جس پر اس کے والد نے شرط رکھی کہ وہ انہیں سورہ بقرہ کی چند آیتیں تلاوت کرکے سنائے۔ تاہم بیٹے نے چند آیتیں ہی نہیں بلکہ پورا سورہ پڑھ کر سنادیا جس پر وہ مسرت سے آبدیدہ ہوگئے اور پہلی بار یہ بات بھول گئے کہ ان کا بیٹا پیدائشی اندھا ہے کیونکہ قرآن حفظ کرکے اس نے یہ ثابت کردیا کہ ارادے مصمم ہوں تو کوئی بھی کارنامہ انجام دیا جاسکتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT