Friday , September 22 2017
Home / کھیل کی خبریں / پاکستانیوں سے زیادہ ’جارح‘ کوئی نہیں : ریاض

پاکستانیوں سے زیادہ ’جارح‘ کوئی نہیں : ریاض

لندن ، 13 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) پاکستانی فاسٹ بولر وہاب ریاض نے انگلینڈ کو خبردار کیا ہے کہ اگر کسی نے بھی آنے والی ٹسٹ سیریز کے دوران پاکستانی کھلاڑیوں کے خلاف ناشائستہ زبان استعمال کی تو انھیں یہ بہت مہنگی پڑے گی۔ جمعرات 14 جولائی سے پاکستان اور انگلینڈ کے درمیان لارڈز کے تاریخی گراؤنڈ میں چار میچوں کی سیریز شروع ہورہی ہے۔2010ء کے بعد سے یہ پاکستانی ٹیم کا پہلا دورۂ انگلینڈ ہے، جب محمد عامر، کپتان سلمان بٹ اور محمد آصف لارڈز میں ہی اسپاٹ فکسنگ کرتے ہوئے رنگے ہاتھوں پکڑے گئے تھے جہاں تینوں کھلاڑیوں نے پیسوں کے عوض جان بوجھ کر ’نو بال‘ کی تھی۔ بعدازاں اُسی ٹور کے دوران جب دونوں ٹیمیں ایک روزہ انٹرنیشنل میچ کے دوران لارڈز کے ہی گراؤنڈ میں مد مقابل آئیں تو انگلینڈ کے بیٹسمن جوناتھن ٹراٹ اور وہاب ریاض کے درمیان تلخ جملوں کا تبادلہ ہوا تھا۔ نیوز ایجنسی ’اے ایف پی‘ کے مطابق اس واقعہ کو یاد کرتے ہوئے ریاض نے کہا، ’’وہ (جوناتھن) کچھ تلخ تھے اور جب بات تلخ ہونے کی ہو تو پاکستان کو کوئی مات نہیں دے سکتا، ہم سب سے زیادہ منہ پھٹ کوئی نہیں‘‘۔ انھوں نے مزید کہا کہ ہم بہت اچھے ہیں لیکن اگر کوئی ہم سے تلخی سے پیش آئے تو پھر ہم اسے معاف نہیں کرتے۔ محمد عامر پاکستانی اسکواڈ میں واپس آچکے ہیں اور لارڈز سے ہی اپنی ٹسٹ کرکٹ کا احیاء کررہے ہیں۔ اس سے قبل انگلش کیپٹن السٹیر کک نے پاکستانی فاسٹ بولر عامر کو خبردار کیا تھا کہ انھیں 6 سال بعد لارڈز میں واپسی پر ناخوشگوار استقبال کا سامنا کرنا پڑسکتا ہے۔ ریاض نے زور دیا کہ عامر اس موقع پر دوبارہ اُبھر کر سامنے آئیں گے اور پاکستانی اسکواڈ اپنے ساتھی کے ساتھ ہے۔ اس معاملے پر ایک صحافی کی جانب سے دوبارہ سوال کئے جانے پر ریاض نے کہا، ’’یہ کہانی ختم ہوچکی ہے دوست، پلیز حال میں زندہ رہیں‘‘۔

TOPPOPULARRECENT