Friday , August 18 2017
Home / سیاسیات / پاکستانی مقبوضہ کشمیر کا حصول پاکستان کے ساتھ ایک مسئلہ

پاکستانی مقبوضہ کشمیر کا حصول پاکستان کے ساتھ ایک مسئلہ

وزیراعظم کے دفتر کے وزیر مملکت جتیندرسنگھ کا بیان ، جنرل راحیل شریف پر تنقید
نئی دہلی ۔ 7 سپٹمبر ۔ ( سیاست ڈاٹ کام) پاکستان کے ساتھ واحد مسئلہ جموںو  کشمیر کے کچھ حصوں کو اُس سے واپس حاصل کرنا ہے جن پر پاکستان کا ناجائز قبضہ ہے ۔ وزیراعظم کے دفتر میں وزیر مملکت جتیندر سنگھ نے آج کہا کہ پاکستان کی فوج کے سربراہ جنرل راحیل شریف کے کشمیر کو ’’غیرمختتم ایجنڈہ‘‘ قرار دینے کے تبصرے انتہائی قابل اعتراض ہیں ۔ جتیندر سنگھ نے پرزور انداز میں کہا کہ جموں و کشمیر ہندوستان کا اٹوٹ حصہ ہے اور اٹوٹ حصہ ہی برقرار رہے گا ۔ انھوں نے کہاکہ اگر جموںو کشمیر سے متعلق کوئی موضوع ہے تو پاکستان اچھی طرح جانتا ہے کہ وہ ریاست کے چند حصے ہیں جن پر پاکستان نے قبضہ کر رکھا ہے اور انھیں ہندوستان میں شامل کرنا ایک ہی مسئلہ ہے ۔ انھوں نے کہاکہ 65 تا 66 سال پاکستان کے غیرقانونی قبضہ میں رہنے کے بعد بھی یہ علاقہ ریاست جموںو کشمیر کا ہے ۔ وہ ایک پریس کانفرنس سے خطاب کررہے تھے ۔ اُن کا تبصرہ پاکستان کی فوج کے سربراہ کی جانب سے کشمیر کو طویل مدتی یا مختصر مدتی غلط مہم جوئی کی صورت میں ہندوستان کو ناقابل برداشت نقصان کا سامنا کرنے کا انتباہ دیتے ہوئے اسے ’’غیرمختتم ایجنڈہ ‘‘ قرار دیا تھا ۔ انھوں نے کہا تھا کہ اگر فوج کسی بھی قسم کی غلط مہم جوئی کا ارتکاب کرتا ہے تو اس کی جسامت اور پیمانہ کا لحاظ کئے بغیر چاہے وہ طویل مدتی ہو یا مختصر مدتی ، دشمن کو ناقابل برداشت قیمت چکانی ہوگی ۔ وہ راولپنڈی میں ہندوستان سے 1965 ء کی پچاسویں سالگرہ تقریب سے خطاب کررہے تھے ۔

TOPPOPULARRECENT