Sunday , August 20 2017
Home / ہندوستان / پاکستان خود اپنی پالیسیوں کے سبب الگ تھلگ

پاکستان خود اپنی پالیسیوں کے سبب الگ تھلگ

سرتاج عزیز کے تبصروں پر ردعمل سے انکار، وکاس سوروپ کا بیان
بیناڈلم ۔ 17 اکتوبر ۔ (سیاست ڈاٹ کام ) اُڑی دہشت گرد حملہ کے بعد سارک تنظیم کے رکن ممالک سے ہندوستان کو حاصل ہونے والی تائید اور اسلام آباد میں منعقد شدنی سارک چوٹی کانفرنس کے التواء کے درمیان ہندوستان نے آج واضح طورپر کہا کہ پاکستان خود اپنی پالیسیوں کے سبب سب سے الگ تھلگ ہوگیا ہے اور جس سے اُس ( ہند) کا کوئی تعلق نہیں ہے ۔ آٹھویں بریکس چوٹی کانفرنس کے بعد وزارت اُمور خارجہ کے ترجمان وکاس سواروپ نے ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ’’اگر کوئی خود اپنے ملک کی پالیسیوں کے سبب سب سے الگ تھلگ ہوگیا ہے تو اس سے ہندوستان کا کوئی سروکار نہیں ہے ‘‘ ۔ سواروپ سے پوچھا گیا تھا کہ پٹھان کوٹ حملوں کے بعد پاکستان کو سب سے الگ تھلگ کرنے کیلئے ہندوستان کی پالیسی کامیاب ہوئی ہے ۔ انھوں نے مزید کہا کہ ’’سارک کے رکن تمام ممالک نے متحدہ طورپر کہا تھا کہ سارک چوٹی کانفرنس اسلام آباد میں جاری دہشت کی فضاء میں منعقد نہیں ہوسکتی ‘‘ ۔ واضح رہے کہ 18 ستمبر کو اُڑی حملے میں 19 ہندوستانی سپاہیوں کی ہلاکت کے بعد ہندوستان نے پاکستان پر بین الاقوامی دباؤ بڑھانے کی کوشش کی تھی کیونکہ ان حملوں میں ملوث دہشت گردوں کا تعلق پاکستان میں موجود جیش محمد سے تھا۔ تاہم وکاس سواروپ نے وزیراعظم کی جانب سے پاکستان کو دہشت گردی کی ماں قرار دیئے جاے پر پاکستانی ذمہ دار سرتاج عزیز کے تبصروں پر کسی ردعمل کے اظہار سے انکار کردیا اور کہا کہ وہ اپنی ہفتہ وار پریس کانفرنس میں اس مسئلہ پر ردعمل کا اظہار کریں گے ۔

TOPPOPULARRECENT