Sunday , September 24 2017
Home / پاکستان / پاکستان میں بندوق بردار نے صحافی کو گولی مار دی

پاکستان میں بندوق بردار نے صحافی کو گولی مار دی

صحافت سے متعلق افراد پر حملوں کا سلسلہ گزشتہ سال سے جاری

کراچی۔ 9 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) پاکستان کے ایک سینئر صحافی کو آج ایک نامعلوم بندوق بردار نے اس کی قیام گاہ کے باہر گولی مارکر ہلاک کردیا۔ ایک دن قبل ہی ایک نامور ذرائع ابلاغ گھرانے کے ایک ملازم کو شہر میں ذرائع ابلاغ سے تعلق رکھنے والے افراد پر پاکستان میں تازہ ترین حملے کے دوران ہلاک کردیا گیا تھا۔ 42 سالہ آفتاب عالم مختلف چیانلس بشمول جیو نیوز، سما ٹی وی سے وابستہ تھا۔ وہ شہر کے شمالی سیکٹر سی کے علاقہ میں اپنی گاڑی پیچھے لے رہا تھا، جبکہ اس نے اپنے بچوں کو گھر پر چھوڑا تھا جبکہ دو موٹر سائیکل سوار بندوق برداروں نے اس پر فائرنگ کردی۔ آفتاب کو گولیوں کے کئی زخم اس کے سر، گردن اور سینہ پر آئے۔ اسے فوری عباسی شہید ہاسپٹل منتقل کیا گیا جہاں ڈاکٹروں نے اسے مردہ قرار دیا۔ ایسا معلوم ہوتا ہے کہ یہ چن چن کر ہلاک کرنے کی ایک کارروائی تھی۔ پولیس عہدیدار منیر شیخ نے کہا کہ یہ دو دن کے اندر دوسرا واقعہ تھا

جس میں ذرائع ابلاغ سے تعلق رکھنے والے افراد کو نامعلوم موٹر سائیکل سوار نشانہ بازوں نے حملہ کا نشانہ بنایا تھا۔ کل رات پاکستان کے سب سے بڑے ذرائع ابلاغ گروپ جیو ٹی وی نیٹ ورک پر تنقید کی گئی تھی جبکہ تین نامعلوم بندوق برداروں نے بہادر آباد کے علاقہ میں ایک سینئر ٹیکنیکل انجینئر کو ہلاک اور ڈرائیور کو زخمی کردیا تھا اور انجینئر ارشد علی جعفری کے بالائی جسم پر 9 گولیاں چلائی گئی تھیں اور فوری ہلاک ہوگیا  جبکہ ڈرائیور انیس چوہان زخمی ہوگیا اور اسے ایک خانگی دواخانہ میں شریک کردیا گیا۔ حملہ آور فائرنگ کے بعد موقع واردات سے موٹر سائیکلوں پر فرار ہوگئے۔ صوبہ سندھ کے وزیر داخلہ سہیل انور خان سیوال کو بھی سینئر پولیس عہدیداروں نے فوری مشتبہ افراد کو گرفتار کرنے کی ہدایت دی ۔ یہ دو واقعات گزشتہ سال کے ایک واقعہ کی تلخ یاد تازہ کرتے ہیں جو شمالی ناظم آباد کے علاقہ میں پیش آیا تھا جس میں ایکسپریس میڈیا گروپ کے دو صحافیوں کو جو ان کی نیوز ویان میں بیٹھے ہوئے تھے، گولی مارکر ہلاک کردیا گیا تھا۔ جیو ٹی وی کے ایک صفحہ اول کے میزبان حامد میر پر بھی گزشتہ سال پاکستان کے جنوبی ساحلی شہر کراچی میں حملہ کیا گیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT