Thursday , August 17 2017
Home / ہندوستان / پاکستان کی فوج کی بلا اشتعال فائرنگ و شلباری میں ایک جوان اور کمسن لڑکی ہلاک

پاکستان کی فوج کی بلا اشتعال فائرنگ و شلباری میں ایک جوان اور کمسن لڑکی ہلاک

جموں و کشمیر کے اضلاع پونجھ، راجوڑی اور بارہمولہ میں شہری علاقہ بھی نشانہ، ہندوستانی فوج کی جوابی فائرنگ
جموں/ سری نگر۔17 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) جموں و کشمیر کے پونجھ، راجوڑی اور بارہمولہ اضلاع میں لائین ااف کنٹرول کے قریب پاکستانی فوج کی بھاری شلباری اور شدید فائرنگ کے نتیجہ میں ایک فوجی جوان اور ایک کمسن لڑکی جاں بحق اور دیگر چار افراد زخمی ہوگئے۔ ہندوستانی فوج نے پاکستانی فائرنگ کا موثر جواب دیا جس کے بعد دونوں کے درمیان بڑے پیمانے پر فائرنگ کا تبادلہ شروع ہوگا۔ دفاع کے ایک ترجمان نے کہا کہ ’’پاکستانی فوج نے صبح 7:30 بجے راجوری سیکٹر اور ضلع پونجھ میں بلا اشتعال فائرنگ کی ہندوستانی فوج نے مضبوط اور موثر انداز میں جواب دیا۔‘‘ فائرنگ کے تبادلہ میں نائک مدثر احمد شدید زخمی ہوگئے جب ان کے بنکر پر مورٹار شل گرپڑے۔ انہیں ایم آئی روم منتقل کیا گیا جہاں وہ زخموں سے جانبر نہ ہوسکے۔ 37 سالہ فوجی جوان مدثر احمد کا تعلق موضع دوچو سے تھا۔ ان کے پسماندگان میں اہلیہ شاہین مدثر اور دو بچے ہیں۔ دفاع کے ترجمان نے کہا کہ ’’احمد ایک بہادر اور مخلص سپاہی تھے۔ وہ اپنے کام سے بے پناہ محبت رکھتے تھے۔ سچی لگن سے فرائض کی انجام دہی اور عظیم قربانی کے لیے ملک ہمیدہ ان کا ممنون رہے گا۔ ایک پولیس افسر نے کہا کہ پاکستان نے بالاکوٹ، مانجاکوٹ اور پڑوسی بیلٹ کے کئی شہری علاقوں پر بھی فائرنگ کی۔ راجوری کے ایک سینئر ضلع عہدیدار نے کہا کہ مانجا کوٹ بیلٹ میں شلباری سے دو شہری زخمی ہوگئے۔ جنہیں دواخانہ میں شریک کیا گیا ہے۔ ایک جوان بھی زحمی ہوا ہے۔ مانجا کوٹ اور بالا کوٹ بلٹس میں شدید شلباری کے پیش نظر تمام اسکولس بند کردیئے گئے ہیں اور عوام سے کہا گیا ہے کہ وہ اپنے گھروں سے باہر نہ نکلیں۔ دفاعی ذرائع نے کہا کہ پاکستانی سپاہیوں نے بعدازاں ان میں بھی ضلع بارہمولہ میں کمال کوٹ علاقہ کے اڑی کے تین مواضعات میں تقریباً 3 بجے بلا اشتعال فائرنگ کی جس میں ایک سپاہی زخمی ہوا ہے۔ پاکستان کی بلا وقفہ فائرنگ کا سلسلہ کئی گھنٹوں تک جاری رہا۔ جولائی کے دوران جموں و کشمیر میں لائن آف کنٹرول کے قریب پاکستانی فوج کی طرف سے جنگ بندی کی خلاف ورزیوں میں بشمول چار فوجی جوان، سات افراد ہلاک ہوئے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT