Tuesday , September 26 2017
Home / ہندوستان / پتھراؤ کرنیوالوں میں جنگجو چھپے ہوتے ہیں: کشمیر پولیس

پتھراؤ کرنیوالوں میں جنگجو چھپے ہوتے ہیں: کشمیر پولیس

سکیورٹی فورسز پر حملے کئے جاتے ہیں ۔ اس رجحان کیخلاف حکمت عملی زیرغور : پولیس سربراہ ایس پی وید
سری نگر ، 3اپریل (سیاست ڈاٹ کام) جموں وکشمیر کے پولیس سربراہ ڈاکٹر ایس پی وید نے کہا کہ وادئ کشمیر میں پتھراؤ کرنے والے ہجوموں کے پیچھے جنگجو چھپے ہوتے ہیں جو سیکورٹی فورسز کو اپنے حملوں کا نشانہ بناتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اس رجحان سے نمٹنے کی حکمت عملی مرتب کی جارہی ہے ۔ پولیس سربراہ نے کہا کہ گزشتہ برس ایجی ٹیشن کے دوران بھی سیکورٹی فورسز کو ہجوم کے پیچھے چھپے جنگجوؤں کے حملہ کا سامنا کرنا پڑا تھا۔ انہوں نے کہا کہ حملوں سے خون خرابے کے بغیر کچھ بھی حاصل نہیں ہوتا ہے ۔ دارالحکومت سری نگر کے پائین شہر کے نوہٹہ میں اتوار کی شام جنگجوؤں کے گرینیڈ حملے میں جاں بحق ہونے والے پولیس کانسٹیبل شمیم احمد کو خراج عقیدت پیش کرنے کے سلسلے میں یہاں پولیس لائنز سری نگر میں منعقدہ تقریب کے حاشئے پر ایس پی وید نے نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے کہا، ’’ہمارے جوانوں کو پتھراؤ کرنے والے ہجوم کے پیچھے سے بھی گولیوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے ۔ گرینیڈ پھینکنا بھی اس منصوبے کا حصہ ہے‘‘۔ انہوں نے کہا کہ ایسے حملوں کو روکنے کی حکمت عملی مرتب کی جارہی ہے ۔ پولیس سربراہ نے کہا: ’’ہم اس (رجحان) سے نمٹنے کی حکمت عملی مرتب کریں گے ۔ مجھے یقین ہے کہ ہم اپنی مہارت کی بدولت اس (رجحان) سے نمٹنے میں کامیاب ہوں گے‘‘۔ انہوں نے کہا کہ گذشتہ برس ایجی ٹیشن کے دوران بھی سیکورٹی فورسز کو پتھراؤ کرنے والے ہجوم کے پیچھے چھپے جنگجوؤں کے حملے کا سامنا کرنا پڑا تھا۔ انہوں نے کہا، ’’پچھلے سال جب حالات خراب تھے تب بھی ایسا حملہ ہوا۔ حملوں سے جانی نقصان کے بغیر کچھ نہیں ہوتا ہے ۔ اس سے صرف خون خرابہ ہوتا ہے‘‘۔ ایس پی وید نے نوہٹہ میں جنگجوؤں کے حملے میں جاں بحق ہونے والے پولیس اہلکار کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے اُس کے لواحقین کے ساتھ ہمدردی کا اظہار کیا۔ انہوں نے کہا:’’میں اُس کنبے سے دلی ہمدردی کا اظہار کرتا ہوں جنہوں نے اپنا ایک عزیز کھودیا ہے ‘‘۔ دریں اثناء پولیس لائنز سری نگر میں منعقدہ مہلوک پولیس اہلکار کی نعش پر پھول مالائیں چرھانے کی تقریب میں پولیس سربراہ کے علاوہ سینئر پولیس عہدیداروں نے حصہ لیا۔ خیال رہے کہ نوہٹہ میں گزشتہ شام ایک پولیس اہلکار شمیم احمد ساکنہ گریز بانڈی پورہ اُس وقت ہلاک جبکہ 11دیگر سیکورٹی فورس بشمول سنٹرل ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) کے تین اہلکار زخمی ہوگئے جب جنگجوؤں نے نوہٹہ میں ریاستی پولیس اور سیکورٹی فورسز کی ایک مشترکہ پارٹی پر گرینیڈ حملہ کیا۔ جنگجو تنظیم تحریک المجاہدین نے اس حملے کی ذمہ داری قبول کرلی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT