Sunday , September 24 2017
Home / شہر کی خبریں / پرانا شہر دہشت گردوں کا گڑھ

پرانا شہر دہشت گردوں کا گڑھ

’’چھوٹا پاکستان ‘‘ ریمارک کا اعادہ، رکن اسمبلی گوشہ محل راجہ سنگھ اپنے بیان پر اٹل
حیدرآباد۔ 14 مئی (سیاست نیوز) حیدرآباد کے پرانا شہر کو ’’چھوٹا پاکستان‘‘ قرار دینے سے متعلق اپنے بیان پر قائم رہتے ہوئے رکن اسمبلی گوشہ محل راجہ سنگھ نے آج اعادہ کیا کہ حیدرآباد کا پرانا شہر دہشت گردوں کا گڑھ ہے اور یہ چھوٹا پاکستان ہے۔ راجہ سنگھ اپنے موقف پر اٹل رہتے ہوئے اس بات کا اعادہ کیا کہ میرے ایسا کہنے میں کوئی غلط بات نہیں ہے۔ میں نہیں سمجھتا کہ کوئی غلط بیان دیا ہے، کیونکہ ملک کے کسی بھی حصہ میں دہشت گردی کا واقعہ پیش آتا ہے تو اس میں ملوث دہشت گرد حیدرآباد ہی سے گرفتار ہوتے ہیں۔ چند مشہور دہشت گرد بھی یہیں سے گرفتار ہوئے ہیں۔ حیدرآباد میں کئی سلیپر سیلس نے پناہ لے رکھی ہے۔ راجہ سنگھ نے استفسار کیا کہ ہم آخر اس سچائی کو کس طرح جھٹلا سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ انہوں نے اس مسئلہ کو تلنگانہ اسمبلی میں بھی کئی مرتبہ اٹھایا تھا لیکن چیف منسٹر چندر شیکھر راؤ نے اس معاملہ کو سنجیدگی سے ہرگز نہیں لیا۔ میں نے چیف منسٹر سے درخواست کی تھی کہ وہ حیدرآباد کے پرانے شہر میں تلاشی آپریشن شروع کروائیں۔ اس آپریشن کے بعد ہی پرانے شہر کے کئی گھروں سے بم اور دیگر دھماکو اشیاء دستیاب ہوں گی۔ لیکن چیف منسٹر تلنگانہ نے پرانا شہر میں تلاشی آپریشن کیلئے اقدامات ہرگز کوشش نہیں کی۔ وہ صرف اس علاقہ سے مسلمانوں کی ہمدردی حاصل کرنا چاہتے ہیں۔ قبل ازیں دن میں راجہ سنگھ اور درسگاہ جہاد و شہادت کے صدر عبدالماجد کے خلاف دو علیحدہ مقدمات درج کرلئے ہیں۔ ذرائع کے مطابق 7 مئی کو ایک نیوز چیانل کو انٹرویو دیتے ہوئے رکن اسمبلی گوشہ محل راجہ سنگھ نے الزام عائد کیا تھا کہ حیدرآباد کا پرانا شہر چھوٹا پاکستان ہے اور انہوں نے یہ بھی دعویٰ کیا تھا کہ وہ نوجوانوں کو تربیت دیتے ہوئے ایک خانگی فوج تیار کررہے ہیں تاکہ وقت آنے پر مقابلہ کیا جاسکے۔

TOPPOPULARRECENT