Thursday , August 24 2017
Home / Top Stories / پرانا پل کے تمام 36 پولنگ بوتھس پر کل دوبارہ رائے دہی

پرانا پل کے تمام 36 پولنگ بوتھس پر کل دوبارہ رائے دہی

Armed security personnel guards the EVM’s at City College in Old City of Hyderabad on Wednesday. Counting of votes schedule on 5th of this Month.Pic:Style photo service.

کانگریس امیدوار محمد غوث کی گرفتاری اور کانگریس قائدین ،رپورٹر سیاست مبشرالدین خرم پر حملوں کے واقعات کا جائزہ ، ریاستی الیکشن کمیشن کا فیصلہ
حیدرآباد ۔ 3 فبروری (سیاست نیوز) ریاستی الیکشن کمیشن نے پرانا پل بلدی ڈیویژن 52 کے تمام 36 پولنگ بوتھس پر 5 فبروری بروز جمعہ دوبارہ رائے دہی کا حکم دیا ہے۔ آج جاری کردہ اپنے اعلامیہ میں ریاستی الیکشن کمیشن نے کانگریس امیدوار محمد غوث کی گرفتاری اور کانگریس قائدین پر صدر مجلس اسدالدین اویسی اور ان کے حامیوں کی جانب سے حملوں کی شکایت کا جائزہ لیتے ہوئے رائے دہی میں ہونے والی دھاندلیوں کا نوٹ لیکر دوبارہ پولنگ کا فیصلہ کیا۔ الیکشن کمیشن نے آج رات جاری کردہ اپنے اعلامیہ میں بلدی ڈیویژن پرانا پل 52 کی رائے دہی میں ہونے والی سنگین انتخابی بے قاعدگیوں کی شکایت کا بھی جائزہ لیا۔

اس کے علاوہ مجلس اتحادالمسلمین کے قائدین اور کارکنوں کی جانب سے تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی کے صدر اور ایم ایل اے اتم کمار ریڈی اور قانون ساز کونسل میں کانگریس لیڈر محمد علی شبیر پر حملہ کے علاوہ مسٹر محمد مبشرالدین خرم رپورٹر سیاست کو دھمکی دینے کے واقعات کا بھی سخت نوٹ لیا۔ پرانا پل وارڈ انتخابات میں ہونے والی رائے دہی کی فیصد میں بتدریج کمی کا بھی نوٹ لیا گیا ۔ الیکشن کمیشن نے تمام واقعات کے علاوہ مجلس کے کارندوں کی کارستانیوں کی وجہ سے ہونے والی انتخابی بے قاعدگیوں کے مدنظر دوبارہ رائے دہی کا حکم دیا ہے۔ اعلامیہ کے مطابق ریاستی الیکشن کمیشن نے جی ایچ ایم سی قانون 1955ء کے دفعہ 607C(C) کے تحت انتخابی عمل میں دھاندلیوں کا پتہ چلا کر 2 فبروری کو 36 پولنگ اسٹیشنوں پر ہوئی رائے دہی کو کالعدم قرار دیا۔ ان تمام پولنگ بوتھس میں 5 فبروری صبح 7 بجے سے 5 بجے شام تک دوبارہ رائے دہی ہوگی۔ کمشنر اور اسپیشل آفیسر، الیکشن اتھاریٹی جی ایچ ایم سی اور ریٹرننگ آفیسر وارڈ 52 پرانا پل کو مذکورہ احکامات پر عمل آوری کی ہدایت دی ہے اور متعلقہ پولیس اسٹیشنوں میں دوبارہ ر ائے دہی کیلئے انتظامات کرنے کا حکم دیا ہے۔
واضح رہے کہ میرچوک پولیس اسٹیشن کے باہر صدر مجلس اور ان کے حامیوں نے کانگریس قائدین پر حملہ کیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT