Friday , August 18 2017
Home / اضلاع کی خبریں / پرانہیتا چیوڑلہ کے ڈیزائن کی تبدیلی نقصاندہ

پرانہیتا چیوڑلہ کے ڈیزائن کی تبدیلی نقصاندہ

مباحث کا چیلنج مقبول ، نظام آبادمیں کانگریس قائدین کی پریس کانفرنس
نظام آباد:27؍اگست (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز)پردیش کانگریس کے ترجمان نظام آباد اربن انچارج مہیش کمار گوڑ ، ضلع کانگریس صدر طاہر بن حمدان آج یہاں نظام آباد میں صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے ٹی آرایس کے ضلع صدر ایگا گنگاریڈی کی جانب سے پرانہیتا چیوڑلہ ڈیزائن کی تبدیلی پر کھلے عام مباحث کے چیلنج کو قبول کرتے ہوئے کانگریس اس کیلئے تیار ہے۔ مسٹر مہیش کماگوڑ، طاہر بن حمدان ، پردیش کانگریس کے سکریٹری این رتناکر، کانگریس فلور میونسپل کارپوریشن ایم اے قدوس و دیگر نے صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ کانگریس کے دور حکومت میں آنجہانی ڈاکٹر وائی ایس راج شیکھرریڈی عادل آباد، نظام آباد، کریم نگر، میدک، ورنگل، رنگاریڈی اورنلگنڈہ کے 7 اضلاع کو سیراب کا پانی فراہم کرنے اور آبی ضرورتوں کی تکمیل کیلئے 7 ہزار کروڑ روپیوں کی لاگت سے پرانہیتا چیوڑلہ پراجیکٹ کے ڈیزائن کو ویاپ کو انجینئر س کی جانب سے حاصل کیا تھا اور صلاح و مشورہ کے بعد ان کاموں کی منظوری عمل میں لاتے ہوئے کاموں کا آغاز کیا گیا تھااور نظام آباد ضلع میں ان کاموں کو تیزی کے ساتھ انجام دیا جارہا تھا۔ حکومت کی تبدیلی کے بعد پرانہیتا چیوڑلہ کے کاموں کو روکتے ہوئے ڈیزائن کی تبدیلی کا اعلان کیا جارہا ہے۔ ڈیزائن کی تبدیلی سے کروڑوں روپئے کا عوامی پیسہ ضائع ہوگا۔ چیف منسٹر مسٹر چندر شیکھررائو اس بات کا لحاظ کئے بغیر ہی ڈیزائن کی تبدیلی کا فیصلہ کیا گیا ہے جبکہ پرانہیتا چیوڑلہ کا ڈیزائن ویاپکو سے حاصل کیا اور ویاپکو ڈیزائن کی تبدیلی کس طرح کررہی ہے اس بارے میں وضاحت پیش کریںاور ویاپکو کیخلاف قانونی طورپر کارروائی کرنے کا بھی انتباہ دیا۔ پراجیکٹ کے تبدیلی کے نام پر گذشتہ دیڑھ سال سے کاموں کو بند کرنے کی وجہ سے ضلع کے کسانوں کو زبردست نقصان ہورہا ہے۔ ٹی آرایس پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ کمیشنوں کی خاطر ڈیزائن کی تبدیلی عمل میں لائی جارہی ہے جو سراسر غلط ہے۔ جبکہ 400 کروڑ سے زائد اس پر خرچ کئے گئے ہیں۔ مسٹر مہیش کمار گوڑ، طاہر بن حمدان نے کہا کہ شہر نظام آباد کے اسمارٹ سٹی کو شامل کرنے کیلئے کوئی کارروائی نہیں کی گئی۔ امرت اسکیم سے20 کروڑ روپئے سالانہ حاصل ہوں گے۔

TOPPOPULARRECENT