Tuesday , July 25 2017
Home / شہر کی خبریں / پرانے شہر حیدرآباد میں عنقریب ایرکنڈیشن آر ٹی سی بس خدمات، سائین بورڈس پر اردو تحریر کرنے کا فیصلہ

پرانے شہر حیدرآباد میں عنقریب ایرکنڈیشن آر ٹی سی بس خدمات، سائین بورڈس پر اردو تحریر کرنے کا فیصلہ

حیدرآباد۔22مئی (سیاست نیوز) پرانے شہر میں چلائے جانے والی آر ٹی سی بسوں میں بہت جلد ائیر کنڈیشنڈ بسوں کا اضافہ ہوگا علاوہ ازیں نئی روٹس کی شروعات پر بھی تلنگانہ اسٹیٹ روڈ ٹرانسپورٹ کارپوریشن کی جانب سے غور کیا جانے لگا ہے اور بتایا جاتا ہے کہ نئی روٹس کی نشاندہی کے فوری بعد تجرباتی اساس پر منی بسوں کو چلانا شروع کیا جائے گا اور ضرورت اور استعمال کو دیکھتے ہوئے اس میں اضافہ کیا جائے گا۔ آر ٹی سی ذرائع کے مطابق پرانے شہر میں چلائی جانے والی بسوں پر اردو میں اندراج کیا جائے گا تاکہ مسافرین کو پڑھنے میں سہولت ہو۔ پرانے شہر میں چلائی جانے والی آر ٹی سی بسوں پر مسافت اردو میں درج کئے جانے کے متعلق کہا جا رہا ہے کہ نئی بسوں اور بس شیلٹرس پر بھی اردو تحریروں کے اندراج کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ عہدیداروں کا کہنا ہے کہ پرانے شہر میں بس کے استعمال کے رجحان میں مزید اضافہ کے لئے نئی روٹس پر خدمات کا آغاز نا گزیر ہے اس بات کا جائزہ لینے کے بعد بعض روٹس کی نشاندہی کی گئی ہے اور ان میں بیشتر مختصر مسافتی روٹس ہیں جہاں خدمات کی فراہمی سے عوام کو سہولت حاصل ہوگی۔ آر ٹی سی نے اردو سائن بورڈس کی تنصیب کا فیصلہ کرتے ہوئے نئی بسوں کے آغاز کو قطعیت دینے کا عمل شروع کردیا ہے ۔فاروق نگر فلک نما میں شروع کئے گئے نئے بس ٹرمنل میں خدمات کو بہتر بنانے کیلئے بھی اقدامات کئے جا رہے ہیں۔ بتایاجاتا ہے کہ پرانے شہر میں آر ٹی سی کی جانب سے شروع کردہ نئی ائیر کنڈیشنڈ بس خدمات ’واجرا‘ اور پلے ویلگو کو بھی روشناس کروانے کی حکمت عملی تیار کی گئی ہے اور اس حکمت عملی کے تحت پرانے شہر کی اہم سڑکو ںو مسافتوں پر ان ائیر کنڈیشنڈ بسوں کو متعارف کروایا جائے گا ۔مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کے حدود میں فی الحال 2283آرڈنری بسیں چلائی جا رہی ہے ہیں جبکہ 882میٹرو ایکسپریس‘ 150میٹرو ڈیلکس‘ 100منی بسیں اور131 سی این جی بسیں چلائی جا رہی ہیں۔ بتایا جاتا ہے کہ بلدی حدود میں روزانہ 33لاکھ مسافرین بس خدمات سے استفادہ حاصل کرتے ہیں اور دونوں شہروں میں بس مسافرین کو خدمات کی فراہمی کے سلسلہ میں متعدد اقدامات کئے جانے لگے ہیں اور پرانے شہر میں چلائی جانے والی بسوں پر انگریزی ‘ تلگو کی تحریروں کے علاوہ اردو میں پتہ کا اندراج کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے جس سے اردو داں طبقہ کو سہولت حاصل ہوگی اور وہ آسانی سے اپنی منزل تک جانے والی بس میں سوار ہو سکیں گے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT