Monday , May 29 2017
Home / شہر کی خبریں / پرانے شہر کے بینکوں سے رقم کی کم مقدار میں اجرائی پر نوٹس

پرانے شہر کے بینکوں سے رقم کی کم مقدار میں اجرائی پر نوٹس

ایم بی ٹی قائد امجد اللہ خان خالد کی نمائندگی پر اقلیتی کمیشن کا اقدام
حیدرآباد 15 ڈسمبر (پریس نوٹ) پرانا شہر کے تمام علاقوں میں حالیہ نوٹ بندی کے باعث بینکس اور اے ٹی ایم مراکز پر بالخصوص اقلیتی آبادی والے علاقوں میں ہونے والی روپیوں کی قلت اور مذکورہ بینکس انتظامیہ کی تعصب پرستی کے خلاف ترجمان ایم بی ٹی امجد اللہ خان خالد نے اے پی اسٹیٹ میناریٹی کمیشن چیرمین عابد رسول خان سے ملاقات کرتے ہوئے عرضی داخل کرتے ہوئے مذکورہ واقعات سے واقف کروایا تھا۔ چنانچہ کمیشن نے مذکورہ شکایت پر ایک مقدمہ درج کیا جس کا کیس نمبر 211-2016 کے تحت تقریباً 15 بشمول آر بی آئی بینک کے علاوہ ریجنل ایچ ڈی ایف سی، ریجنل منیجر آندھرا بینک سعیدآباد، چیف جنرل منیجر اسٹیٹ بینک آف انڈیا گن فاؤنڈری، چیف منیجر اسٹیٹ بینک آف انڈیا کوٹھی، چیف جنرل منیجر سنٹرل بینک عابڈس، جنرل منیجر سنڈیکیٹ، ڈپٹی جنرل منیجر آئی سی سی ، ڈپٹی جنرل منیجر وجئے بینک، اورینٹل بینک، یو سی او بینک کے علاوہ انڈین اوورسیز بینک، یونین بینک آف انڈیا، بینک آف بروڈہ، پنجاب نیشنل بینک کو نوٹسیں جاری کرتے ہوئے فی الفور مذکورہ مسئلہ کی یکسوئی پر زور دیا۔ بینکوں کے صدور دفاتر کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کیا گیا ہے۔ چنانچہ امجد اللہ خان خالد کی نمائندگی پر پرانا شہر کے بینک انتظامیہ نے دشواری و عوامی پریشانیوں سے معذرت خواہی کرتے ہوئے اس طرح کے واقعات کے تدارک کے لئے لائحہ عمل کو قطعیت دینے کا عہد کیا۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT