Saturday , July 29 2017
Home / کھیل کی خبریں / پلسکوا پہلا مقام حاصل کرنے والی پہلی چیک جمہوریائی کھلاڑی

پلسکوا پہلا مقام حاصل کرنے والی پہلی چیک جمہوریائی کھلاڑی

لندن، 12 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) چیک جمہوریہ کی ٹینس اسٹارکیرولینا پلسکووا ومبلڈن میں دوسرے راؤنڈ میں باہر ہونے کے باوجود ڈبلیوٹی اے ٹینس کی درجہ بندی میں جرمنی کی اینجلک کیربر کو شکست دے کر دنیا کی نمبر ایک خاتون کھلاڑی بن گئی ہیں۔وہ یہ کامیابی حاصل کرنے والی اپنے ملک کی پہلی خاتون ٹینس کھلاڑی بھی ہیں۔25 سالہ پلسکووا نمبر ایک کھلاڑی بننے والی23 ویںکھلاڑی ہیں۔چیک کھلاڑی کو یہ کامیابی خواتین کے سنگلز کوارٹر فائنل میں رومانیہ کی سمونا ہالیپ کو برطانیہ کی جوھانا کونٹا کے خلاف شکست سے حاصل ہوئی ہے ۔ہالیپ اگر کونٹا کو شکست دے دیتیں تو ان کے پاس نمبر ایک کھلاڑی بننے کا موقع تھا لیکن 7-6 6-7 4-6 سے شکست کے بعد یہ موقع ان کے ہاتھ سے چلا گیا۔ ومبلڈن میں تیسری سیڈ پلسکووا اگرچہ میگڈالانا رباریکووا کے خلاف دوسرے ہی راؤنڈ میں شکست کے بعد باہر ہو چکی ہیں لیکن اس سال وہ فرنچ اوپن سیمی فائنل تک پہنچی تھیں اور نشانات کی بنیاد پر درجہ بندی کے حساب سے وہ سب کو پیچھے چھوڑ کر اول مقام پر پہنچ گئی ہیں۔دلچسپ یہ بھی ہے کہ چیک کھلاڑی نے کیریئر میں کبھی بھی گرانڈ سلام نہیں جیتا ہے ۔انہوں نے اس سال برسبین، دوحہ اور ومبلڈن پریکٹس ٹورنمنٹ ایسٹبورن میں خطاب جیتے ہیں۔مونٹی کارلو کی رہنے والي پلسکووا سال 1975 میں شروع ہوئے درجہ بندی کے بعد سے نمبر ایک بننے والی چیک جمہوریہ کی پہلی خاتون کھلاڑی ہیں۔ 18مرتبہ کی گرانڈ سلام چیمپئن مارٹینا نوراتلووا سال1978 میں نمبر ایک کھلاڑی بنی تھیں لیکن وہ تب امریکہ کی نمائندگی کرتی تھیں۔ جرمن کھلاڑی کیربر34 ہفتوں تک دنیا کی نمبر ایک کھلاڑی رہیں لیکن انہیں اس جگہ پر برقرار رہنے کے لئے ومبلڈن فائنل میں پہنچنا ضروری تھا۔

TOPPOPULARRECENT