Monday , September 25 2017
Home / سیاسیات / پناجی میونسپل کارپوریشن کے انتخابات میں بی جے پی کو شکست

پناجی میونسپل کارپوریشن کے انتخابات میں بی جے پی کو شکست

کانگریس کے باغی لیڈر کے حامیوں کو واضح اکثریت
پناجی۔/8مارچ، ( سیاست ڈاٹ کام ) گوا میں قبل از وقت اسمبلی انتخابات کو خارج از امکان قرار دیتے ہوئے چیف منسٹر لکشمی کانت پارلیکر نے آج کہا ہے کہ بی جے پی ہائی کمان یہ فیصلہ کرے گی کہ آئندہ انتخابات میں پارٹی کی قیادت کون کرے گا۔ تاہم انہوں نے اس نقطہ نظر کو مسترد کردیا کہ پناجی سٹی کارپوریشن کے انتخابات میں شکست پارٹی کیلئے ایک بڑا دھکا ہے۔ گوا میں 9مارچ 2012کے انتخابات میں بی جے پی کی کامیابی کے بعد منوہر پاریکر کو چیف منسٹر بنایا گیا تھا اور انہیں نومبر 2014 میں مرکزی وزیر دفاع نامزد کیا گیا اور ان کی جگہ لکشمی کانت پارلیکر کو نامزد کیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ گوا سی کارپوریشن کے انتخابات میں حکمران جماعت کے امیدواروں کو کانگریس کے  خارج کردہ رکن اسمبلی اٹانیسو مناساریٹے کے امیدواروں نے شکست دے دی۔ انہوں نے 30رکنی بلدی ادارہ میں واضح اکثریت حاصل کرلی ہے۔ یہ کارپوریشن، گوا کے دارالحکومت پناجی کا احاطہ کرتی ہے۔ 6مارچ کے انتخابات سے قبل بی جے پی کی زیر قیادت کونسل کا قبضہ تھا۔ کانگریس کے باغی رکن اسمبلی کے پیانل نے17 وارڈس، بی جے پی کے پیانل نے 13وارڈس اور کانگریس نے صرف 9نشستوں پر کامیابی حاصل کی ہے جس پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے مناسیریٹے نے کہا کہ شہری ادارہ کے انتخابات کے نتائج سے یہ ظاہر ہوتا ہے کہ گوا کے عوام بی جے پی سے نجات ) آزادی ) کے خواہشمند ہیں۔

TOPPOPULARRECENT