Monday , September 25 2017
Home / Top Stories / پنجاب کو منشیات اور کرپشن سے پا کیا جائیگا

پنجاب کو منشیات اور کرپشن سے پا کیا جائیگا

کانگریس کے انتخابی منشور میں ریاست کی عظمت رفتہ کی بحالی کا وعدہ
نئی دہلی، 9جنوری (سیاست ڈاٹ کام) کانگریس نے پنجاب کو نشہ سے پاک بنانے ، بجلی کی شرحوں میں کمی کرنے ، کسانوں کو قرض میں راحت دینے اور ہر گھر میں نوکری جیسے وعدے کے ساتھ ریاستی اسمبلی کے لئے آج اپنا انتخابی منشور جاری کردیا۔ انتخابی منشور میں چار ماہ میں پنجاب کو منشیات سے پاک کرنے کے ساتھ ہی پانی کی تقسیم، بے روزگاری اور خواتین کو ریزرویشن جیسے امور پر ترجیح دی گئی ہے اور صنعت، سروس سیکٹر ، بنیادی ڈھانچہ اور زرعی ترقی کو خصوصی ترجیح دینے کا وعدہ کیا گیا ہے ۔ سابق وزیر اعظم من موہن سنگھ ، پنجاب کانگریس کے صدر امریندر سنگھ ، پنجاب کانگریس کی سابق صدر راجندر کور بھٹل، کانگریس الیکشن کمیٹی کی سربراہ امبیکا سونی، پارٹی کے پنجاب امور کے انچارج آشا کماری اور کانگریس میڈیا سیل کے سربراہ رندیپ سنگھ سرجے والا نے یہاں کانگریس ہیڈکوارٹر میں انتخابی منشور جاری کیا۔ انتخابی منشور ایک ساتھ پانچ جگہ سے جاری کیا گیا ہے ۔ دہلی میں ڈاکٹر سنگھ اور کیپٹن امریندر نے ، چنڈی گڑھ میں پارٹی کے ریاستی صدر نے یہ انتخابی منشور جاری کیا۔ اس کے ساتھ ہی جالندھر، لدھیانہ، بھٹنڈا ، امرت سر اور پٹیالہ میں بھی انتخابی منشور جاری کیا گیا ۔ ریاستی اسمبلی کی 117 سیٹوں کے لئے چار فروری کو ایک ہی مرحلے میں پولنگ ہوگی۔ کانگریس نے پنجاب اسمبلی کے لئے جاری منشور میں ہر گھر میں ایک شخص کو ملازمت دینے اور بے روزگار نوجوانوں کو ڈھائی ہزا رروپے مابانہ بھتہ دینے کا وعدہ کیا گیا ہے ۔ پارتی نے اقتدار میں آنے کے بعد چار ماہ کے اندر ریاست کو منشیات سے پاک کرنے کا وعدہ کیا ہے ۔ انتخابی منشور میں کہا گیا ہے کہ پنجاب میں کسانوں کی حالت بہت خراب ہے اور کسانوں پر مسلسل قرض کا بوجھ بڑھ رہا ہے ۔ ریاست میں کسانوں پر 67000 کروڑ روپے کا قرض ہے اور اس کو حل کرنے کے لئے پالیسی تیار کی جائے گی۔اس کے علاوہ بے گھر لوگوں ، دلتوں، شیڈولڈ کاسٹ اور شیڈولڈ ٹرائب کے لوگوں کے لئے مفت رہائش کے نظم کا بھی وعدہ کیا گیا ہے ۔ پارٹی نے وی و ی آئی پی کلچر کو ختم کرنے کا بھی وعدہ کیا ہے ۔ پارٹی کا انتخابی منشور جاری کرتے ہوئے سابق وزیر اعظم من موہن سنگھ نے الزام لگایا کہ شرومنی اکالی دل اور بی جے پی کی حکومت نے ریاست کو برباد کردیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ریاست میں کانگریس کی حکومت بنے گی تو پنجاب کو ہوئے نقصان کو پورا کرنے کی کوشش کی جائے گی۔ پنجاب میں گزشتہ 10 سال سے اقتدار سے محروم کانگریس نے آج رائے دہندوں کو رجھانے کے لیے وعدوں کی بارش کردی اور انتخابی منشور میں کہا گیا ہے کہ کانگریس کو اقتدار میں لایا گیا تو زرعی قرضوں کی معافی، برقی، اسمارٹ فونس اور نصابی کتب مفت سربراہ کئے جائیں گے اور بیروزگار نوجوانوں کو بھتہ بھی دیا جائے گا۔ سابق وزیراعظم ڈاکٹر منموہن سنگھ نے یہ الزام عائد کیا کہ اکالی دل۔ بی جے پی کے 10 سالہ دور حکومت میں بد نظمی اور نااہلی کی وجہ سے ریاست کی معیشت تباہ ہوگئی ہے۔ منشیات کا استعمال عام ہوجانے سے نوجوانوں کے اخلاق میں انحطاط آگیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پنجاب جو کبھی خوشحال ریاست تھی اس کی عظمت رفتہ کی بحالی کے لیے کانگریس کو دوبارہ اقتدار میں لانا ضروری ہے تاکہ ریاست کو ترقی اور تعمیر کی در پر گامزن کیا جاسکے۔ صدر پردیش کانگریس امریندر سنگھ جو کہ چیف منسٹر کے عہدہ کے دعویدار ہیں یہ وعدہ کیا کہ آئندہ 50 سال میں 25 لاکھ روزگار کے مواقع فراہم کئے جائیں گے اور بیروزگاروں کو ماہانہ 2,500 روپئے بھتہ ادا کیا جائیگا۔علاوہ ازیں منشیات اور کرپشن پر قابو پانے کے لیے سخت اقدامات اور اندرون 90 یوم نئی صنعتی پالیسی وضحع کردی جائے گی جبکہ بے گھر لوگوں کے لیے مکانات تعمیر کیئے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ اکالیوں کے دور حکومت میں پنجاب سرفہرست مقام سے 19 ویں مقام پر آگیا ہے۔ ستلیج یمنا کنال کے مئسلہ پر انہوں نے کہا کہ اسمبلی میں ایک قانون منظور کرتے ہوئے کسی بھی ریاست کو پانی میں حصہ دار نہیں بنایا جائے گا۔ یہ دریافت کئے جانے پر امریندر سنگھ چیف منسٹر کے عہدہ کے امیدوار ہوں گے اے آئی سی سی سکریٹری انچارج آشا کماری نے بتایا کہ چونکہ انتخابی مہم کی قیادت وہی (امریندر سنگھْ کررہے ہیں لہٰذا اس عہدہ کے حق دار بھی وہی ہوں گے۔

TOPPOPULARRECENT