Thursday , October 19 2017
Home / اضلاع کی خبریں / پودوں کی نگہداشت میں تساہل ناقابل برداشت

پودوں کی نگہداشت میں تساہل ناقابل برداشت

کوڑنگل میں ہریتا ہارم پروگرام ، ریاستی وزراء جے کرشنا راؤ اور مہیندر ریڈی کا خطاب

کوڑنگل۔ 13 جولائی (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) گزشتہ روز ہریتا ہارم پروگرام کے تیسرے مرحلے کے تحت بڑے پیمانے پر پودے لگائے گئے۔ ریاستی وزراء جوپلی کرشنا راؤ وزیر مصنوعات ، مہیندر ریڈی وزیر ٹرانسپورٹ اور ایم پی محبوب نگر ضلع جیتندر ریڈی نے مخاطب کرتے ہوئے انکشاف کیا کہ دنیا بھر میں پودوں کی شجرکاری میں تلنگانہ دوسرے نمبر پر ہے۔ کستوربا گاندھی اسکول میں وزیر مہیندر ریڈی اور ایم پی جیتندر ریڈی نے بڑے پیمانے پر پودے لگائے۔ اس موقع پر ہر دونوں نے مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ ہر گاؤں میں 40 ہزار پودے لگائے جائیں اور ساتھ ہی انتباہ دیا کہ لگائے ہوئے پودوں کی نگہداشت میں تساہل ناقابل برداشت ہوگا۔ پودوں کی فراہمی، پانی، ٹریکٹرس میں منتقلی وغیرہ تمام اخراجات کی حکومت کی جانب سے بھرپائی کرتے ہوئے شجرکاری مہم انجام دی جارہی ہے۔ دیہی مقامات پر مدارس میں ، دفاتر میں، کھیتوں سے متصل وغیرہ ہر مقام پر پودے لگانے کا مشورہ دیا۔ عوام سے خواہش کی کہ اس پروگرام کو کامیاب کریں اور کہا کہ ہر مقام کو چار حصوں میں تقسیم کرتے ہوئے چار عہدیداروں کی نگرانی میں عملہ کے ارکان بھرپور تعاون کرتے ہوئے پروگرام کو کامیاب بنائیں۔ اس پروگرام میں سابق رکن اسمبلی گروناتھ ریڈی، ایم پی پی دیاکر ریڈی، سرپنچ وینکٹ ریڈی، ڈپٹی سرپنچ ایس ایم غوثن، ٹی آر ایس منڈل وائس پریسیڈنٹ امتیاز احمد اور ایم اے باقی قیصر کے علاوہ دیگر محکمہ جاتی عہدیداروں نے حصہ لیا۔ 6 بجے شام ایم پی جیتندر ریڈی و ریاستی وزیر مہیندر ریڈی کے ہاتھوں کوڑنگل کی وسط آبادی میں ہفتہ واری بازار کے مقام پر منی واٹر ٹینک کا افتتاح عمل میں آیا۔ بعدازاں 7 بجے شام ٹی ٹی ڈی کلیانا منڈپم میں منعقدہ مختلف محکمہ جاتی عہدیداران کے اجلاس کو مخاطب کرتے ہوئے ایم پی جیتندر ریڈی نے کہا کہ آندھرا پردیش میں سرکاری ملازمین کو تنخواہ کا فقدان، عہدیداران ڈیزل کی قلت سے دوچار ہونے سے حکومت کو مشکلات کا سامنا ہونے پر یہاں ریاست تلنگانہ میں معقول فنڈس مہیا ہیں۔ ریاستی وزیر جوپلی کرشنا راؤ نے کہا کہ آئندہ سے ملاوٹی سیندھی کے تدارک کیلئے ہریتا ہارم پروگرام کے تحت ہر گاؤں میں سیندھی کے درخت کے پودے لگائے جائیں۔ وزیر موصوف نے مہتمم آبکاری کو ہدایت جاری کی کہ ضلع بھر میں 7 لاکھ سیندھی کے پودے فراہم کئے جائیں تاکہ آئندہ سے ہر کوئی ملاوٹی سیندھی کی لعنت سے بچتے ہوئے خالص سیندھی کا استعمال کرسکیں۔ اس ضمن میں سرکل انسپکٹر آبکاری و منظم آبکاری سرینواس، شیام سندر کو خصوصی دلچسپی لینے پر زور دیا۔ ایم پی جیتندر ریڈی نے کہا کہ حلقہ اسمبلی کوڑنگل ہر لحاظ سے پسماندہ علاقہ ہونے سے ہمہ جہتی ترقی کیلئے سعی کی جارہی ہے۔

TOPPOPULARRECENT