Saturday , August 19 2017
Home / جرائم و حادثات / پولیس چیک پوسٹ کو لاری کی ٹکر، کانسٹبل ہلاک

پولیس چیک پوسٹ کو لاری کی ٹکر، کانسٹبل ہلاک

حیدرآباد /22 ستمبر (سیاست نیوز ) عید الاضحی اور گنیش تہوار کے پیش نظر خصوصی طور پر قائم کئے گئے ایک پولیس چیک پوسٹ میں کنکٹریٹ ریڈی مکس لاری گھس پڑی جس میں ایک کانسٹیبل برسر موقع ہلاک ہوگیا جبکہ تین زخمی ہوگئے ۔ تفصیلات کے بموجب رام دیو گورہ آرٹیلری سنٹر کے قریب گولکنڈہ پولیس کی جانب سے بڑے جانوروں کی منتقلی اور گنیش تیوہار کے موقع پر خصوصی چیک پوسٹ قائم کیا گیا تھا جس میں 23 سالہ جے راہول یادو ، 25 سالہ پون ، 25 سالہ وریندر گوڑ اور سیدلو ڈیوٹی انجام دے رہے تھے کہ رات دیر گئے ابراہیم باغ سے لنگر حوض سمت آنے والی تیز رفتار ریڈی مکس کی لاری کانسٹیبل راہول یادو کو روندتے ہوئے پولیس چیک پوسٹ میں گھس پڑی ۔ اس حادثہ میں راہول یادو برسر موقع ہلاک ہوگیا جبکہ تین کانسٹیبل شدید زخمی ہوگئے ۔ حادثہ کی اطلاع ملنے پر انسپکٹر گولکنڈہ مسٹر خلیل پاشاہ اور گوکنڈہ پولیس کی ٹیم جائے حادثہ پر پہونچکر راہول یادو کی نعش کو دواخانہ عثمانیہ بغرض پوسٹ مارٹم منتقل کیا جبکہ زخمی کانسٹیبلس کو بنجارہ ہلز کے ایک کارپوریٹ دواخانہ میں شریک کیا گیا ۔ بتایا جاتا ہے کہ لاری ڈرائیور یادی ریڈی متوطن ضلع نلگنڈہ نشہ میں دھت تھا اور اس نے پولیس چیک پوسٹ کو ٹکر دینے سے قبل ڈیوائڈر کو نقصان پہونچایا ۔ پولیس گولکنڈہ نے یادی ریڈی کے خلاف مقدمہ درج کرتے ہوئے اسے گرفتار کرلیا ۔ ذرائع نے بتایا کہ راہول یادو آٹھ ماہ قبل محکمہ پولیس میں بھرتی ہوا تھا اور ٹریننگ کے بعد اسے حیدرآباد میں گنیش اور عیدالاضحی کے موقع پر ڈیوٹی پر متعین کیا گیا تھا ۔ شہر میں اس المناک حادثہ میں ایک پولیس جوان کی موت واقع ہونے اور تین پولیس ملازمین زخمی ہونے پر ڈائرکٹر جنرل آف پولیس مسٹر انوراگ شرما ، کمشنر پولیس مسٹر ایم مہیندر ریڈی اور دیگر پولیس عہدیدار دواخانہ عثمانیہ کے مردہ خانہ پہونچکر متوفی کانسٹیبل راہول یادو کے افراد خاندان کو پرسہ دیا اور اس حادثہ پر غم کا اظہار کیا ۔

TOPPOPULARRECENT