Thursday , September 21 2017
Home / شہر کی خبریں / پٹرول پمپس پر ای ویالٹس کا استعمال خطرناک

پٹرول پمپس پر ای ویالٹس کا استعمال خطرناک

ڈیجیٹل ادائیگی کے طریقوں سے گریز کا مشورہ ‘ ششی دھر ریڈی
حیدرآباد24 ڈسمبر ( پی ٹی آئی ) سابق نائب صدر نشین نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھاریٹی ایم ششی دھر ریڈی نے آج کہا کہ ملک بھر میں عوامی تحفظ کیلئے پٹرولیم ریٹیل آوٹ لیٹس پر ڈیجیٹل ادائیگی کے طریقہ کار سے بچنے کیلئے فوری اقدامات کئے جانے چاہئیں۔ انہوں نے کابینی سکریٹری پردیپ کمار سنہا کو ایک مکتوب روانہ کرتے ہوئے واضح کیا کہ نوٹ بندی کے فیصلے کے بعد اس طرح کی آوٹ لیٹس پر کیش لیس معاملتوں کی سمت پیشرفت ہو رہی ہے ۔ یہاں پی او ایس یونٹس ‘ موبائیل ای ویالٹس وغیرہ کا استعمال ہو رہا ہے جو خطرناک ہے ۔ انہوں نے چیف کنٹرولر ایکسپلوزیوس ‘ پٹرولیم اینڈ ایکسپلوسیو سیفٹی کے 19 ڈسمبر کے مکتوب کا حوالہ دیا جس میں یہ واضح کیا گیا ہے کہ گاڑیوں میں فیول بھرتے ہوئے ایسی اشیا کے استعمال سے گریز کرنے کی ضرورت ہے اس مکتوب میں یہ بھی واضح کردیا گیا تھا کہ اگر یہ ای ویالٹس اور موبائیلس وغیرہ اگر خطرناک علاقہ سے باہر ہٹ کر استعمال کئے جاتے ہیں تو ان پر کوئی اعتراض نہیں ہے ۔ ششی دھر ریڈی نے کہا کہ اس مکتوب میں واضح کیا گیا تھا کہ پہلے خطرہ والے علاقہ کی نشاندہی ہونی چاہئے ۔ وہ چونکہ ڈیزاسٹر مینجمنٹ کا تجربہ رکھتے ہیںایسے میں وہ سمجھتے ہیں کہ ایسے اقدامات کئے جانے چاہئیں جن میں احتیاط ہو اور کسی بھی ناگہانی سے نمٹنے کی پوری تیاری ہو۔ انہوں نے کہا کہ اس سلسلہ میں عوام میں بھی بڑے پیمانے پر شعور بیدار کرنے کی ضرورت ہے ۔ انہوں نے مسٹر سنہا کے نام اپنے مکتوب میں خواہش کی کہ تمام ریاستوں کے چیف سکریٹریز اور مرکزی وزارت پٹرولیم کے سکریٹری کو بھی ہدایت دی جائے کہ وہ ایک مقررہ وقت کے اندر اس سلسلہ میں تمام ضروری اقدامات کو یقینی بنائیں۔ انہوں نے کہا کہ اس کے علاوہ یہ پہلو بھی پیش نظر رکھنے کی ضرورت ہے کہ پٹرول پمپس پر ای ادائیگیوں یا کارڈ کے ذریعہ ادائیگی پر صارفین پر اضافی بوجھ بھی عائد کیا جا رہا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT