Tuesday , September 26 2017
Home / ہندوستان / پٹھان کوٹ واقعہ پر کانگریس اور بی جے پی کے درمیان الزام تراشیاں

پٹھان کوٹ واقعہ پر کانگریس اور بی جے پی کے درمیان الزام تراشیاں

اپوزیشن کو وزیراعظم پر تنقید کا حق نہیں، حکمراں جماعت کا استدلال
نئی دہلی ۔ 6 ۔ جنوری (سیاست ڈاٹ کام) کانگریس کے اسی الزام پر کہ پٹھان کوٹ دہشت گردانہ حملہ دراصل سیکوریٹی کوتاہیوں کا نتیجہ ہے، بی جے پی نے آج یہ ادعا کیا کہ فضائیہ کے اڈہ پر سیکوریٹی فورسس کی کارروائی (سیکوریٹی آپریشن) انتہائی کامیابی رہی اور پٹھان کوٹ واقعہ کو ممبئی کے حملوں سے تعبیر کیا ۔ ان حملوں میں انٹلیجنس کے اطلاعات کے باوجود 164 افراد ماردیئے گئے تھے۔ وزیراعظم نریندر مودی کی پاکستانی پالیسی پر سوال اٹھائے جانے پر کانگریس کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے بی جے پی نے کہا کہ نریندر مودی نے پاکستانی ہم منصب نواز شریف کو قوم کے غم و غصہ سے واقف کروایا ہے ، جب دہشت گردانہ حملہ کے بعد پاکستانی وزیراعظم سے ٹیلیفون پر نریندر مودی سے رابطہ قائم کیا تھا ۔ بی جے پی نے یہ یاد دہانی کروائی کی ممبئی حملوں کے بعد پاکستان کی جانب سے کوئی ردعمل ظاہر نہیں کیا گیا تھا۔ سکریٹری بی جے پی مسٹر سریکانت شرما نے بتایا کہ نریندر مودی نے نواز شریف سے مقررہ وقت میں سخت کارروائی کا مطالبہ کیا ہے ۔ پاکستان نے ممکن تعاون کا وعدہ کیا ہے جبکہ ممبئی میں 26/11 دہشت گردانہ حملہ کے بعد پاکستان سے کوئی ردعمل ظاہر نہیں کیا گیا تھا۔ پٹھان کوٹ میں فدائیان حملہ کے خلاف کارروائی انتہائی کامیابی کے ساتھ انجام دی گئی ہے ۔

بی جے پی لیڈر نے کہا کہ کانگریس نے ممبئی حملوں کا تذکرہ کیا ہے جس میں انٹلیجنس اطلاعات کے باوجود سینکڑوں افراد ماردیئے گئے تھے اور حکومت پر انگشت نمائی کا کانگریس کو کوئی اخلاقی حق نہیں پہنچا اور پارٹی کے الزامات سے اس کا ذہن دیوالیہ پن ظاہر ہوتا ہے۔ اس کے برخلاف پٹھان کوٹ میں دہشت گردوں کو فضائیہ اڈہ کے باہر ہی گھیر لیا گیا جس کے باعث ایرفورس کے اثاثہ جات کو کوئی نقصان نہیں پہنچ سکا ۔ واضح رہے کہ بی جے پی کی جوابی تنقید کانگریس لیڈر اور سابق مرکزی وزیر داخلہ سوشیل کمار شنڈے کی جانب سے  پٹھان کوٹ میں حکومت کی کارروائی پر انگشت نمائی کے بعد آئی ہے ۔انہوںنے وزیر داخلہ اور وزیر دفاع سے استعفی اور کارروائی کا مطالبہ کیا ہے اور یہ الزام عائد کیا کہ قوم کی حفاظت کیلئے حکومت کے پاس کوئی نظام نہیں ہے ۔ کانگریس پر جوابی حملہ کرتے ہوئے مسٹر سریکانت شرما نے کہا کہ جو لوگ دہشت گردی مسئلہ کے ذمہ دار ہیں، وہ نریندر مودی سے باز پرس نہ کریں کیونکہ وہ اس مسئلہ کو جڑ پیڑ سے اکھاڑ پھینکنے کیلئے ممکنہ کوشش کر رہے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ ممبئی حملوں کے بارے میں انٹلیجنس کی پیشگی اطلاعات پر کانگریس حکومت خواب غفلت میں تھی ، اس کے برخلاف بی جے پی حکومت برق رفتاری سے کارروائی کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ حساس مسائل پر بھی کانگریس منفی ذہنیت رکھتی ہے اور یہ انتہائی بدبختانہ ہے کہ دہشت گردانہ حملہ کو سیاسی رنگ دینے کی کوشش میں ہے ۔ آخر میں بی جے پی نے سیکوریٹی فورسس کی جراتمندی اور تدبر و فراست کی ستائش کی ہے۔

اروند کجریوال نے فلم وزیر کا مشاہدہ کیا
نئی دہلی ۔ 6 ۔ جنوری : ( سیاست ڈاٹ کام ) : چیف منسٹر دہلی اروند کجریوال نے آئندہ ہفتہ ریلیز ہونے والی ایکشن تھرل فلم ’ وزیر ‘ دیکھی ۔ اس موقع پر فلم کی ٹیم بشمول فرحان اختر ، آدیتی راؤ حیدری ، بیجونمبیار اور ودھو ونود چوپڑا موجود تھے ۔ کجریوال نے کل شام اس فلم کا مشاہدہ کیا ۔ جس میں امیتابھ بچن نے بھی اہم رول ادا کیا ہے ۔ اس فلم کے معاون پرڈیوسر راجکمار ہیرانی اور وی وی چوپڑا ہیں ، دیگر اداکاروں میں نیل نتین مکیش اور جان ابراہام شامل ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT