Saturday , October 21 2017
Home / ہندوستان / پپو کلانی کو عدالت میں پیش کرنے کی درخواست مسترد

پپو کلانی کو عدالت میں پیش کرنے کی درخواست مسترد

جیل سے باہر لانے پر جوکھم ، استغاثہ کا دعویٰ
تھانے ۔ 12 ۔ جولائی : ( سیاست ڈاٹ کام ) : ایک عدالت نے آج جیل میں مقید الہاس نگر کے سابق رکن اسمبلی سریش عرف پپو کلانی کی اس درخواست کو مسترد کردیا ہے کہ گھنشیام بھتیجہ قتل کیس کی سماعت کے لیے انہیں عدالت میں پیش کرنے کے لیے جیل حکام کو ہدایت دی جائے ۔ پہلے ہی سے کلانی کو 1990 میں گھنشیام کے چھوٹے بھائی اندر بھتیجہ کے قتل کیس میں دسمبر 2013 میں سزائے عمر قید دی گئی ہے اور گھنشیام بھتیجہ قتل کیس میں بھی ملزم ہے اور یہ کیس عدالت میں زیر دوران ہے ۔ کلیان کورٹ میں کل 1990 کے گھنشیام بھتیجہ قتل کیس کی باقاعدہ سماعت شروع ہوئی ہے ۔ جس میں کلانی کے علاوہ دیگر 5 افراد ملزم ہیں ۔ تاہم ضلع جج ایم جے مرزا نے کلانی کے وکیل کے اس درخواست کو مسترد کردیا کیس کی سماعت کے لیے انہیں ( کلانی ) عدالت میں پیش کیا جائے ۔ درخواست کی مخالفت کرتے ہوئے اسپیشل پبلک پراسیکویٹر وکاس پاٹل نے کہا کہ اسے عدالت میں پیش کرنے کی چنداں ضرورت نہیں ہے کیوں کہ جیل میں ویڈیو کانفرنس کی سہولت دستیاب ہے جس سے استفادہ کیا جاسکتا ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ کلانی کو عدالت میں پیش کرنا جیل حکام کے لیے جوکھم بن سکتا ہے ۔ لہذا ویڈیو کانفرنس کی سہولت کو استعمال کرنا ہی مناسب رہے گا ۔ واضح رہے کہ 35 سالہ گھنشیام کو 27 فروری 1990 اور ان کے چھوٹے بھائی 30 سالہ اندر بھتیجہ کو 2 ماہ بعد 28 اپریل کو فائرنگ میں ہلاک کردیا گیا تھا اور دونوں وارداتیں تھانے ضلع کے الہاس نگر ٹاون میں پیش آئی تھیں ۔۔

TOPPOPULARRECENT