Tuesday , August 22 2017
Home / اضلاع کی خبریں / پرانہیتا چیوڑلہ آبپاشی پراجکٹ کے ڈیزائن کی تبدیلی کے خلاف احتجاج

پرانہیتا چیوڑلہ آبپاشی پراجکٹ کے ڈیزائن کی تبدیلی کے خلاف احتجاج

کے سی آر میدک کے چیف منسٹر ، تلنگانہ کے نہیں ، ای دیاکر راؤ اور دیگر کی سخت تنقیدیں
شمس آباد ۔ 20 ۔ اگست : ( سیاست نیوز) : شمس آباد میں تلگو دیشم پارٹی کی جانب سے چیوڑلہ پرانہیتا آبپاشی پراجکٹ کے ڈیزائن کی تبدیلی کی مخالفت کرتے ہوئے ایک روزہ دھرنا پرکاش گوڑ راجندر نگر رکن اسمبلی و ضلع رنگاریڈی تلگو دیشم صدر کی قیادت میں پروگرام منعقد کیا گیا جس میں ای دیاکر راؤ رکن اسمبلی نے اپنی مخاطبت میں کہا کہ کے چندر شیکھر راؤ کا دماغی توازن ٹھیک نہیں ہے وہ ہر وقت ایک نیا بیان دیتے ہیں ۔ انتخابات سے قبل کئے وعدوں میں سے ایک وعدہ کی بھی تکمیل نہیں کی گئی ۔ دیاکر راؤ نے تلنگانہ حکومت کو سخت تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ ریاست میں صرف چار افراد جن میں خود کے سی آر ، ان کے فرزند کے ٹی آر ، ہریش راؤ اور بیٹی کویتا کے علاوہ کسی کو بھی اسمبلی یا دیگر مقامات پر بیان دینے یا اعلانات کرنے کی اجازت نہیں ہے ۔ اسمبلی میں بھی تینوں ہی بات کرتے ہیں ۔ سکریٹریٹ جو ایک اچھے مقام پر ہے اسے دوسری جگہ منتقل کرنے کا اعلان کردیا ۔ عثمانیہ دواخانہ کو منہدم کر کے نئی عمارت تعمیر کرنے اور عثمانیہ یونیورسٹی میں جہاں طلباء تعلیم حاصل کر کے اپنی زندگی کو سنوارتے ہیں وہاں پر مکانات تعمیر کرنے کا اعلان کیا ۔ حسین ساگر میں گنیش نمرجن کی اجازت بھی نہ دینے کا اعلان کیا ۔ یہ سب اعلانات صرف ایک پاگل شخص ہی کرسکتا ہے ۔ ناممکن چیزوں کو اعلانات کے ذریعہ عوام کو صرف گمراہ کیا جارہا ہے ۔ کے سی آر چیوڑلہ پرانہیتا آبپاشی پراجکٹ کے ڈیزائن کو تبدیل کرنے کا اعلان کیا جس سے ضلع رنگاریڈی وحیدرآباد میں خشک سالی کا شکار ہوجائیں گے اور صرف ضلع میدک کو ہی فائدہ ہوگا ۔ رنگاریڈی کے پراجکٹ کو میں تبدیل نہیں کیا جاسکتا ہے ۔ راج شیکھر ریڈی نے ان کے دور میں حیدرآباد و رنگاریڈی کی عوام کو پانی کے مسئلہ سے دور رکھنے کے لیے یہ پراجکٹ کا آغاز کیا تھا جس کے لیے اب تک 4500 کروڑ روپئے خرچ کئے جاچکے ہیں۔ عوام پانی کے لیے ترس رہی ہے تو دوسری طرف کے سی آر شراب کو سستی کر کے عوام میں دسہرہ سے دینے کا اعلان کردیا ۔ عوام کو پانی کی ضرورت ہے ، شراب کی نہیں ۔ تلگو دیشم کے ساتھ کانگریس ، بی جے پی ، سی پی آئی اور سی پی ایم سب کو مل کر اس پراجکٹ کے ڈیزائن کی تبدیلی کے خلاف آواز اٹھانے کی ضرورت ہے ۔ اس مسئلہ کو اسمبلی میں بھی اٹھایا جائے گا اور اسمبلی سیشن کو نہیں چلنے دیا جائے گا ۔ پرکاش گوڑ راجندر نگر رکن اسمبلی نے کہا کہ پراجکٹ کے ڈیزائن کی تبدیلی کو کسی بھی قیمت پر برداشت نہیں کیا جائے گا ۔ یہ صرف رنگاریڈی کے عوام کے ساتھ کے سی آر بدلہ لے رہے ہیں ۔ رنگاریڈی میں ٹی آر ایس کا کوئی اثر نہیں ہے ۔ جس کی وجہ سے وہ اس ڈیزائن کو تبدیل کر کے اس کا رخ ضلع میدک کی جانب کررہے ہیں اس مسئلہ کو ہر مقام پر اٹھایا جائے گا ۔ آپباشی پراجکٹ کو جوں کا توں برقرار رکھنے تک جدوجہد کی جائے گی۔ جس کے لیے ہم اپنی جان کی قربانی دینے تک تیار ہیں اور سبھی کو تیار رہنے کی ضرورت ہے ۔ کے سی آر نے انتخابات سے قبل دلت کو چیف منسٹر بنانے کا اعلان کیا تھا اور خود اقتدار پر بیٹھ گئے ۔ تلنگانہ کو وہ اپنی جاگیر سمجھ رہے ہیں اور اپنی من مانی کررہے ہیں ۔ کے سی آر کو چاہئے کہ ریاست کی ترقی کے لیے کام کریں وہ صرف اپنے گھر کی ترقی کے لیے کام کررہے ہیں اور دوسری پارٹیوں کے ارکان اسمبلی کو اپنی پارٹی میں شامل کرنے کے لیے ہی جدوجہد کررہے ہیں ۔ اگر وہ پانچ سال تک اقتدار پر رہے تو پوری ریاست کا دیوالیہ نکل جائے گا ۔ تلگو دیشم کے رکن اسمبلی کی تقریر کے دوران اذان شروع ہوئی اذان کی آواز سنتے ہی انہوں نے اپنی تقریر کو روک دیا اور بعد ازاں اپنی تقریر جاری رکھی ۔ ایک روزہ دھرنا میں پدی ریڈی سابق وزیر وویک گوڑ ، آر کے گاندھی ارکان اسمبلی کے علاوہ دیگر قائدین نے مخاطبت کیں ۔ ایک روزہ دھرنا کی تائید میں رام چندر راؤ ایم ایل سی ، انجن کمار یادو ضلع بی جے پی صدر ، پرساد کمار سابق وزیر ، کارتک ریڈی ، وینوگوڑ راچاملا سدیشور ، ستیش کانگریس قائدین اور پی نرسنگ راو ، سید افسر ، سدھاکر سی پی آئی کی جانب سے پرکاش گوڑ سے ملاقات کر کے کھنڈوا پہناکر ان کی تائید کا اعلان کیا ۔۔

TOPPOPULARRECENT