Sunday , August 20 2017
Home / پاکستان / : پی آئی اے طیارہ حادثہ : نعشوں کی شناخت کیلئے ڈی این اے ٹسٹ

: پی آئی اے طیارہ حادثہ : نعشوں کی شناخت کیلئے ڈی این اے ٹسٹ

پشاور ۔ 8 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائنز نے آج طیارہ حادثہ کے دلسوز واقعہ کیلئے طیارہ کے خراب انجن کو موردالزام ٹھہرایا، جس میں 48 مسافرین جاں بحق ہوگئے جبکہ ملک کی اعلیٰ سطحی ایوی ایشن مجلس نے اب طیارہ حادثہ کی تحقیقات کا اعلان کیا ہے۔ پی آئی اے کے PK-661 طیارہ میں حادثہ کے وقت 48 افراد سوار تھے جن میں معروف پاپ سنگر سے مبلغ اسلام بن جانے والے جنید جمشید، ان کی اہلیہ، ڈپٹی کمشنر چترال اوسامہ ورائچ بھی سوار تھے جو موضع حویلیاں کے قریب حادثہ کا شکار ہوا تھا۔ ایئرلائنز سے جاری بیان کے مطابق طیارہ ATR 42 ٹربو پراپ نوعیت کا تھاجس کا اسلام آبادکے بے نظیر انٹرنیشنل ایرپورٹ سے رابطہ ٹوٹ گیا تھا۔ پی آئی اے صدرنشین اعظم سائیگول نے بھی حادثہ کیلئے انجن کی خرابی کو موردالزام ٹھہرایا۔ دوسری طرف نعشوں کی شناخت کیلئے ڈی این اے ٹسٹ کیا جارہا ہے کیونکہ زیادہ تر نعشیں جل کر بری طرح مسخ ہوچکی ہیں اور ان کی شناخت مشکل ہوگئی ہے۔ ایوب میڈیکل کامپلکس کے ڈاکٹر جنید نے بتایا کہ صرف چھ نعشوں کی شناخت بہ آسانی ہوگئی جبکہ مابقی نعشوں کی شناخت ڈی این اے ٹسٹ کے ذریعہ ہوگی۔

TOPPOPULARRECENT