Friday , June 23 2017
Home / ہندوستان / پی ایچ ڈی اسکالر گلزار احمد وانی کو معاوضہ دینے یوپی حکومت کو ہدایت

پی ایچ ڈی اسکالر گلزار احمد وانی کو معاوضہ دینے یوپی حکومت کو ہدایت

دہشت گردی کے جھوٹے الزامات میں16 سال کی سزا کاٹنے کاہرجانہ ضروری : عدالت

نئی دہلی۔ 23 مئی (سیاست ڈاٹ کام) بارہ بنکی کی عدالت نے حکومت اترپردیش کو ہدایت دی کہ وہ علیگڑھ مسلم یونیورسٹی کے سابق اسکالر گلزار احمد وانی کو معاوضہ ادا کرے جنہیں 2000ء سابرمتی ایکسپریس دھماکہ کیس میں 16 سال جیل کی سزا کاٹنے کے بعد دہشت گردی کے الزامات سے بری کردیا گیا تھا۔ عدالت نے یوگی آدتیہ ناتھ زیرقیادت حکومت کو ہدایت دی کہ وہ گلزار احمد وانی کو جیل میں کاٹے ایام کے لئے ان کی تعلیمی قابلیت کے مطابق ان کی اوسط آمدنی کے تناسب سے معاوضہ ادا کرے کیونکہ وہ اس کیس کی تحقیقات کرنے والے عہدیداروں کی لاپرواہی کا شکار ہوئے ہیں۔ گلزار احمد وانی علیگڑھ مسلم یونیورسٹی سے عربی میں پی ایچ ڈی کررہے تھے جس وقت انہیں 30 جولائی 2001ء کو دہلی سے گرفتار کیا گیا تھا۔ عدالت نے گلزار کی زندگی سے قیمتی برسوں کے نقصان کے لئے یوپی حکومت کو ذمہ دار ٹھہرایا کیونکہ اس حکومت کے عہدیداروں کی لاپرواہی کی وجہ سے ہی ایک نوجوان کا تعلیمی مستقبل تباہ ہوا اور اس لاپرواہی و کوتاہی کے لئے حکومت ریاستی خزانہ سے معاوضہ ادا کرے کیونکہ گلزار کا نہ صرف قیمتی مستقبل تباہ ہوا بلکہ انہیں مالی نقصانات سے بھی دوچار ہونا پڑا تھا۔ عدالت نے کہا کہ عہدیداروں نے ملزم کو ماخوذ کرنے کی منظوری حاصل نہیں کی اور اپنے فرائض سے کوتاہی کرتے ہوئے ان کے خلاف جو چارج شیٹ داخل کی گئی تھی، وہ جھوٹ پر مبنی تھی۔ اس طرح عہدیداروں نے گلزار وانی کی انفرادی آزادی کو ٹھیس پہونچایا اور انہیں جسمانی و ذہنی اذیت بھی دی گئی۔ اس عدالت کو پتہ چلا ہے کہ وہ بے قصور ہیں ، اسی لئے انہیں رہا کردیا گیا اور محمد عبدالمبین کے تعلق سے بھی سال 2000ء کے سابرمتی ایکسپریس دھماکہ میں مبینہ طور پر دروغ گوئی سے کام لیا گیا تھا۔ اس دھماکہ میں 9 افراد ہلاک اور دیگر کئی زخمی ہوئے تھے۔عدالت نے یہ بھی کہا کہ پولیس نے یہ ثابت کرنے کیلئے کوئی شواہد بھی پیش نہیں کئے کہ ان دونوں سازش رچائی تھی جس کے نتیجہ میں ٹرین میں بم دھماکہ ہوا تھا اور ملک کے خلاف جنگ چھیڑنے جیسی حرکت میں ملوث تھے۔ ایڈیشنل سیشن جج ایم اے خاں نے اپنے فیصلہ کو ہندی میں تحریر کرتے ہوئے کہا کہ اگر حکومت محسوس کرتی ہے تو وہ معاوضہ کی رقم متعلقہ پولیس عہدیداروں سے حاصل کرسکتی ہے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT