Sunday , October 22 2017
Home / شہر کی خبریں / چارمینار پیدل راہرو پراجکٹ پر کام بند

چارمینار پیدل راہرو پراجکٹ پر کام بند

رمضان کے بعد ترقیاتی منصوبہ پر عمل آوری کی ہدایت
حیدرآباد۔7جون (سیاست نیوز) چارمینار پیدل راہرو پراجکٹ کے ترقیاتی کاموں کو اندرون ایک ہفتہ مکمل کر لئے جانے کی توقع ہے۔ چارمینار تا گلزار حوض شروع کئے گئے ترقیاتی کاموں کو رمضان کی آمد سے قبل مکمل کرلئے جانے کا منصوبہ تھا لیکن بارش کے سبب کاموں میں تاخیر ہوئی ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ محکمہ پولیس نے بلدی عہدیداروں سے خواہش کی ہے کہ اس ترقیاتی منصوبہ کو عملی جامہ پہنانے کے لئے رمضان المبارک کے بعد تعمیری کاموں کا ازسر نو آغاز کیا جائے تاکہ رمضان کے دوران ٹریفک کی گہما گہمی کے مسائل سے نمٹنے میں کسی قسم کی دشواری نہ ہونے پائے۔ بلدی عہدیداروں کے بموجب گزشتہ ماہ شروع کئے گئے ان کاموں کی تکمیل اندرون ایک ہفتہ کر لی جائے گی۔ ماہ رمضان المبارک کے دوران پرانے شہر کے علاقہ چارمینار کے اطراف و اکناف گہما گہمی ہوا کرتی ہے لیکن گلزار حوض تا چارمینار سڑک بند رکھے جانے کے سبب پیدل راہروؤں کے علاوہ چھوٹے تاجرین کو بھی دشواریوں کا سامنا کرنا پر رہا ہے ان دشواریوں سے نمٹنے کیلئے محکمہ پولیس کی جانب سے کی گئی اس درخواست پر بلدی عہدیداروں نے ردعمل ظاہر کرتے ہوئے تعمیری کاموں کی رفتار کو تیز کردیا ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ چارمینار کے اطراف ترقیاتی کاموں کی تکمیل کی راست نگرانی مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کے اعلی عہدیدار کر رہے ہیں۔ بتایا جاتا ہے کہ بہت جلد چارمینار تا گلزار حوض جاری تعمیری کاموں کی تکمیل کے ساتھ عوام کیلئے اس سڑک کو کھول دیا جائے گا تا کہ ماہ رمضان المبارک کے دوران کوئی مشکلات نہ پیش آئیں۔ واضح رہے کہ چارمینار پیدل راہرو پراجکٹ کے تحت اس اہم ترین سڑک پر پتھر بچھائے جا رہے ہیں جو کہ علاقہ کی خوبصورتی میں اضافہ کے علاوہ پیدل راہروؤ کیلئے سہولت کا باعث ثابت ہوں گے۔محکمہ پولیس کی جانب سے چارمینار تا مدینہ بلڈنگ ماہ رمضان المبارک کے دوران ٹھیلہ بنڈی رانوں اور چھوٹے تاجرین میں نظم کو بہتر بنانے کیلئے ایک صف میں کاروباری سرگرمیوں کو جاری رکھنے کی اجازت دینے کا فیصلہ کیا ہے بتایا جاتا ہے کہ حکومت کی جان ب سے دیئے گئے احکامات کے مطابق چارمینار کے اطراف کے علاوہ مدینہ بلڈنگ تک ٹھیلہ بنڈی رانوں کو ہراساں نہ کرنے فیصلہ کیا گیا ہے لیکن ان میں نظم پیدا کرتے ہوئے ٹریفک میں خلل نہ ہو نے پائے ایسے اقدامات کئے جانے کی توقع ہے۔

TOPPOPULARRECENT