Thursday , August 24 2017
Home / دنیا / چلی میں 8.3 شدت کا زلزلہ ‘ 10 افراد ہلاک

چلی میں 8.3 شدت کا زلزلہ ‘ 10 افراد ہلاک

سانٹیاگو 17 ستمبر ( سیاست ڈاٹ کام ) چلی ‘آج 8.3 شدت کا انتہائی طاقتور زلزلہ سے دہل کر رہ گیا جس کے نتیجہ میں کم از کم10 افراد ہلاک ہوگئے ہیں اور تقریبا 10 لاکھ افراد کا تخلیہ کروایا گیا ہے ۔ اب یہ اندیشے پیدا ہوگئے ہیں کہ سونامی کی لہریں جاپان تک پہونچ سکتی ہیں۔ زلزلہ انتہائی طاقتور تھا اور اس کے اثر سے چلی سے تقریبا 1,500 کیلومیٹر دور تک بوئنس آئرس ‘ ارجنٹینا میں بھی عمارتیں دہل کر رہ گئیں ۔ عوام یہاں خوف کے عالم میں سڑکوں پر نکل آئے ۔ ٹی وی فوٹیج میں دکھایا گیا ہے کہ ہمہ منزلہ دوکانوں میں زبردست تباہی ہوئی اور یہاں دوکانوں کا ساز و سامان گر کر ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہوگیا ۔ جغرافیائی اعتبار سے زلزلوں کا شکار زیادہ ہونے والے ملک چلی کی تاریخ میں یہ چھٹواں سب سے طاقتور زلزلہ تھا ۔ جاریہ سال یہ دنیا کا سب سے طاقتور زلزلہ بھی تھا ۔ نائب وزیر داخلہ محمود علئیو نے یہ بات بتائی ۔ وزیر داخلہ جورگ برگوس نے مہلوکین کی تعداد آٹھ بتائی ہے ۔ پہلے زلزلہ کے بعد طاقتور مابعد جھٹکے بھی محسوس کئے گئے ۔ اس کے علاوہ ساحل چلی پر کئی گھنٹوں تک سونامی کی وارننگ بھی جاری کردی گئی تھی تاہم صبح کے بعد اس وارننگ سے دستبرداری اختیار کرلی گئی ۔ کئی لوگوں نے اپنے اپنے مقامات سے تخلیہ کرکے بلند میدانی علاقوں کا رخ کیا تھا ۔ اس زلزلہ کے بعد نیوزی لینڈ اور بحرالکاہل علاقہ کے کئی ممالک مے سونامی کی وارننگ جاری کردی گئی ۔ چلی میں زائد از 135,000 خاندانوں کو شمال وسطی ساحلی علاقہ میں برقی کے بغیر گذارہ کرنا پڑا ۔ نیشنل ایمرجنسی آفس نے یہ اطلاع دی ۔ ابتداء میں یہ تعداد اور بھی زیادہ ظاہر کی گئی تھی ۔وسطی چاؤپرا صوبہ کو حکومت چلی کی جانب سے ڈیزاسٹر زون قرار دیدیا گیا ہے اور وہاں فوجی رول کا اعلان ہوگیا ہے ۔ یہ صوبہ زلزلہ کے مبدا سے بہت قریب واقع ہے ۔ امریکی جیالوجیکل سروے کے بموجب زلزلہ کا جھٹکا عالمی معیار وقت کے مطابق 22.54 بجے پیش آیا اورا س کی شدت زلزلہ پیما پر 8.3 ریکارڈ کی گئی ۔ مقامی عوام نے زلزلہ کو انتہائی طاقتور قرار دیا ہے ۔
سانٹیاگو کی ایک شہری جئینیٹ ماٹے نے کہا کہ پہلے ارتعاش آہستگی سے شروع ہوا اور پھر یہ شدت اختیار کرتا گیا ۔ اس نے بتایا کہ ہم اس وقت 12 ویں منزل پر تھے اور ہم خوف کاشکار تھے کیونکہ یہ ارتعاش رک نہیں رہا تھا ۔ پہلے یہ الگ نوعیت کا تھا تاہم بعد میں اس میں مزید شدت پیدا ہوگئی ۔ وزیر داخلہ برگوس نے کہا کہ ساحلی ٹاؤنس اور شہروں سے عوام کے تخلیہ کا حکم دیدیا گیا ہے تاہم یہ احتیاطی اقدام ہے ۔ ساحلی علاقوں میں تعلیمی اداروں کو بھی چھٹی کا اعلان کردیا گیا ہے۔ کہا گیا ہے کہ مہلوکین میں ایک خاتون کے علاوہ سانٹیاگو میں مرنے والا ایک 86 سالہ معمر شہری بھی شامل ہے ۔ سانٹیاگو شہر میں انتہائی نراج جیسی صورتحال تھی جہاں لوگ ایک دوسرے کا خیال کئے بغیر خود کسی محفوظ مقام کو فرار ہونے کی کوشش کر رہے تھے ۔ کئی شہروں میں برقی سربراہی کا سلسلہ بھی منقطع ہوگیا تھا اور عوام کو اندھیرے میں رات گذارنی پڑی ۔ کہا گیا ہے کہ درجنوںافراد زلزلہ کی وجہ سے زخمی ہوئے ہیں۔اصل جھٹکے کے بعد شدت کے مابعد جھٹکے بھی محسوس کئے گئے اور ایک مابعد جھٹکہ کی شدت خود 7 ریکارڈ کی گئی ۔ ابھی زلزلہ سے ہوئے مالی نقصانات کا کوئی اندازہ نہیں ہوسکا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT