Saturday , August 19 2017
Home / جرائم و حادثات / چندرائن گٹہ حملہ کیس: ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر پولیس ساؤتھ زون کا بیان قلمبند

چندرائن گٹہ حملہ کیس: ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر پولیس ساؤتھ زون کا بیان قلمبند

حیدرآباد /15 مارچ ( سیاست نیوز ) چندرائن گٹہ حملہ کیس کی سماعت آج بھی جاری رہی اور ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر آف پولیس ساؤتھ زون مسٹر کے بابو راؤ نے عدالت میں اپنا بیان قلمبند کروایا ۔ انہوں نے عدالت کو بتایا کہ وہ 31 مئی سال 2010 سے 31 ڈسمبر سال 2011 تک سنٹرل کرائم اسٹیشن ( سی سی ایس ) ڈیٹکٹیو کے اسسٹنٹ کمشنر پولیس کی حیثیت سے خدمات انجام دے چکے ہیں ۔ انہوں نے بتایا کہ 21 مئی سال 2011 کو اس وقت کے ڈپٹی کمشنر آف پولیس سی سی ایس مسٹر جے ستیہ نارائنا نے انہیں ہدایت دی تھی کہ وہ بعض آرمری شاپس پہونچ کر اسلحہ سے متعلق تفصیلات اکٹھا کریں ۔ انہوں نے چارمینار ، پتھرگٹی پر واقع رفیق آرمری پہونچ کر محمد بن عمر یافعی اور حسن بن عمر یافعی کے اسلحہ ( ریوالورس ) سے متعلق تمام تفصیلات حاصل کی ۔ انہوں نے بتایا کہ ڈی سی پی سی سی ایس کی ہدایت پر انہوں نے رفیق آرمری کے ذمہ دار محمد شفیق سے بھی بعض تفصیلات حاصل کی اور بعد ازاں وہاں کے رجسٹرس کا بھی معائنہ کیا ۔ اسی طرح انہوں نے معظم جاہی مارکٹ پر واقع معین آرمری پہونچ کر وہاں کے ذمہ دار مسٹر اقبال کو ایک تحریری درخواست دیتے ہوئے ان سے ملزمین کی جانب سے جمع کئے گئے ہتھیاروں کے تفصیلات حاصل کئے ۔ مذکورہ آرمری کے سے حاصل کئے گئے دستاویزات اور دیگر مواد کو حملہ کیس کے تحقیقاتی عہدیدار ایم سرینواس کے حوالے کردیا ۔ وکیل دفاع جی گرومورتی کی جانب سے کئے گئے جرح کے دوران بتایا کہ انہیں آرمری پہونچکر تفصیلات حاصل کرنے کیلئے ڈی سی پی سے تحریری ہدایت نہیں ملی تھی ۔ لیکن انہوں نے اکٹھا شدہ مواد اور دیگر دستاویزات کو تحقیقاتی عہدیدار سرینواس کو تحریر میں پیش کیا ۔ وکیل دفاع نے یہ سوال کیا کہ تحقیقاتی عہدیدار کو حوالے کئے گئے دستاویزات کی نقل کیا ان کے پاس موجود ہے ۔ مسٹر بابو راؤ نے بتایا کہ ان کے پاس نقل موجود نہیں ہے ۔ جبکہ ان کا بھی بیان تحقیقات کے دوران قلمبند کیا گیا تھا ۔ انہوں نے اس بات سے انکار کردیا کہ پولیس کی جانب سے ضبط کئے گئے ہتھیاروں کا تعلق اس کیس سے نہیں ہے اور وہ عدالت میں جھوٹا بیان دے رہے ہیں ۔ اس کیس کے اور ایک گواہ انسپکٹر پرتاپ ریڈی نے بھی اپنا بیان قلمبند کرویا اور ان پر کل جرح کیا جائے گا ۔

TOPPOPULARRECENT