Wednesday , September 27 2017
Home / شہر کی خبریں / چندرا بابو نائیڈو پر جھوٹے وعدوں کے ذریعہ اقتدار حاصل کرنے کا الزام

چندرا بابو نائیڈو پر جھوٹے وعدوں کے ذریعہ اقتدار حاصل کرنے کا الزام

حیدرآباد /3 اگست ( سیاست نیوز ) سابق رکن اسمبلی حلقہ اودے گیری نے کہا کہ گذِتہ انتخابات کے موقع پر اگر وائی ایس آر کانگریس پارٹی قرضوں کو معاف کرنے کا جھوٹا وعدے کرکے اعلان کرتے تو آج صدر وائی ایس آر کانگریس پارٹی مسٹر وائی ایس جگن موہن ریڈی ہی ریاست آندھراپردیش کے چیف منسٹر عہدے پر فائز رہتے تھے ۔ مسٹر ایم چندر شیکھر ریڈی سابق رکن اسمبلی نے آج اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے ریاست آندھراپردیش میں برسر اقتدار تلگودیشم پارٹی کو اپنی شدید تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ صدر تلگودیشم پارٹی مسٹر این چندرا بابو نائیڈو نے گذشتہ انتخابات کے موقع پر ناقابل عمل وعدے کرکے و تعیقنات دیکر چیف منسٹر مسٹر این چندرا بابو نائیڈو نے نہ صرف اقتدار حاصل کیا بلکہ ریاست آندھراپردیش کی عوام کے ساتھ دھوکہ کیا ہے ۔ انہوں نے مسٹر چندرا بابو نائیڈو پر ریاست میں کوئی موثر و مثبت اقدامات کرنے میں ناکام ہوجانے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ چیف منسٹر این چندرا بابو نائیڈو صرف زبانی جمع کرخ کی باتیں کر رہے ہیں اور بالخصوص عوامی فلاح و بہبود پر کوئی توجہ نہیں دے رہے ہیں جس کی وجہ سے عوام میں تلگو دیشم پارٹی حکومت کی کارکردگی ، زبردست مایوسی پائی جارہی ہے بلکہ عوام میں تلگودیشم حکومت کی ناقص کارکردگی کے باعث برہمی کا اظہار بھی کیا جارہا ہے ۔ انہوں نے ریاست آندھراپردیش کیلئے خصوصی موقف حاصل کرنے میں ناکام رہنے کا مسٹر چندرا بابو نائیڈو پر الزام عائد کیا ۔

TOPPOPULARRECENT