Wednesday , August 23 2017
Home / شہر کی خبریں / چندرا بابو کو منہ دکھانے کے قابل نہیں ہوں

چندرا بابو کو منہ دکھانے کے قابل نہیں ہوں

کونسل حلقہ کرنول کے نتیجہ پر ڈپٹی چیف منسٹر کرشنا مورتی کا ردعمل
حیدرآباد ۔ /22 مارچ (سیاست نیوز) آندھراپردیش قانون ساز کونسل حلقہ کرنول ادارہ جات مقامی کے منعقدہ انتخاب پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے ڈپٹی چیف منسٹر کے ای کرشنا مورتی نے کہا کہ توقع کے مطابق اکثریت  حاصل ہوتی تو بہت اچھا ہوتا ۔ انہوں نے کہا کہ اکثریت حاصل نہ ہونے کی وجہ سے وہ چیف منسٹر مسٹر این چندرا بابو نائیڈو کو منہ دکھانے کے قابل نہیں رہے ۔ کرشنا مورتی نے کہا کہ مسٹر شلپا چکراپانی ریڈی اگر تھوڑی احتیاط برتتے تو اچھا ہوتا ۔ انہوں نے کہاکہ آئندہ چند دنوں میں منعقد ہونے والے کرنول میونسپل کارپوریشن کے انتخابات ان کے لئے اہمیت کے حامل ہے ۔ وہ ان انتخابات میں تلگودیشم پارٹی کو بھاری اکثریت سے کامیابی دلانے کی کوشش کریں گے ۔ کیونکہ یہ ان کی عزت کا سوال ہے ۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے تلگودیشم قائدین اور کارکنوں پر زور دیا کہ وہ آئندہ انتخابات کیلئے آپسی تال میل کے ساتھ کام کریں ۔کے ای کرشنا مورتی نے کہا کہ چیف منسٹر این چندرا بابو نائیڈو نے انہیں کابینہ میں کافی اہمیت دی ہے ۔ اور وزارتی عہدہ نہیں دیا بلکہ ڈپٹی چیف منسٹر کے عہدہ پر فائز کیا ہے ۔ لہذا یہ ان کی ذمہ داری ہوگی کہ وہ چیف منسٹر این چندریا بابو نائیڈو کی توقعات پر پورا اتریں ۔

 

چندرا بابو نائیڈو کو جگن کا جوابی چیلنج
حیدرآباد۔/22مارچ، ( سیاست نیوز) آندھرا پردیش اسمبلی میں قائد اپوزیشن جگن موہن ریڈی نے چیف منسٹر این چندرا بابو نائیڈو کے چیلنج پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ صرف 67 نہیں بلکہ وہ تمام 175 اسمبلی حلقوں میں انتخابات کیلئے تیار ہیں۔ انہوں نے خبردار کیاکہ آئندہ پارلیمانی اجلاس تک آندھرا پردیش کو خصوصی موقف نہ دینے کی صورت میں وائی ایس آر کانگریس کے تمام ارکان اسمبلی مستعفی ہوجائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ریاست کے ساتھ کی جارہی ناانصافیوں کو قومی سطح پر اُجاگرکیا جائے گا۔ جگن نے کہا کہ سابق چیف منسٹر آندھرا پردیش ڈاکٹر وائی ایس راج شیکھر ریڈی حکومت میں مکمل کئے گئے پراجکٹس کا افتتاح کرتے ہوئے چندرا بابو نائیڈو اس کا سہرا اپنے سر باندھنے کی کوشش کررہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT