Thursday , September 21 2017
Home / شہر کی خبریں / چیف ایگزیکٹیو آفیسر منان فاروقی کی استعفیٰ کی پیشکش

چیف ایگزیکٹیو آفیسر منان فاروقی کی استعفیٰ کی پیشکش

بعض ارکان کی انتظامی اُمور میں مداخلت کی شکایت
حیدرآباد۔14 ستمبر (سیاست نیوز) تلنگانہ وقف بورڈ کے اجلاس میں آج اس وقت ہلکی سی سنسنی دوڑ گئی جب چیف ایگزیکٹیو آفیسر منان فاروقی نے بعض ارکان کے رویہ کی شکایت کرتے ہوئے عہدے سے استعفے کا پیشکش کردیا۔ انہوں نے کہا کہ بعض ارکان نہ صرف انتظامی امور میں مداخلت کررہے ہیں بلکہ اپنے حق میں فیصلے کے لیے انہیں ہراساں کیا جارہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ان حالات میں وہ چیف ایگزیکٹیو آفیسر کی حیثیت سے فرائض انجام نہیں دے سکتے۔ لہٰذا بورڈ انہیں دوبارہ متعلقہ محکمہ کو واپسی کی قرارداد منظور کرے ۔ منان فاروقی کے اس اچانک اقدام سے ارکان حیرت میں پڑگئے اور انہوں نے وجوہات طلب کی۔ انہوں نے بتایا کہ گزشتہ چند ماہ سے بعض ارکان مختلف سفارشات کے ساتھ ان سے رجوع ہورہے ہیں اور ان کی مرضی مطابق فیصلے نہ کرنے پر الزامات عائد کیے جارہے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ چیف ایگزیکٹیو آفیسر کی حیثیت سے ان کی ذمہ داری کسی بھی معاملہ کی مکمل جانچ کے بعد ہی فیصلہ کرنا ہے اور وہ کسی کے دبائو کے تحت کام نہیں کرسکتے۔ اس بارے میں وہ صدرنشین وقف بورڈ کو ایک سے زائد مرتبہ شکایت کرچکے ہیں۔ مسلسل ہراسانی اور دبائو کے نتیجہ میں ان کی صحت بھی متاثر ہورہی ہے۔ ارکان نے ان کے موقف کی تائید کرتے ہوئے واضح کیا کہ کسی بھی رکن کو مختلف سیکشنوں میں مداخلت کا اختیار نہیں ہے۔ صدرنشین محمد سلیم نے کہا کہ اگر کسی بھی رکن کو کام ہو تو وہ راست صدرنشین سے رجوع ہوسکتے ہیں یا سی ای او سے رجوع کیا جاسکتا ہے برخلاف اس کے متعلقہ سیکشن سے رجوع ہونا ٹھیک نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ چیف ایگزیکٹیو آفیسر پر جانبداری یا کسی مخصوص پارٹی کے حق میں کام کرنے کا الزام مناسب نہیں ہے۔ تمام ارکان نے منان فاروقی کو مکمل تعاون کا یقین دلایا۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT