Wednesday , August 23 2017
Home / Top Stories / چین بھی پاکستانی دہشت گردی کا شکار ہوگا

چین بھی پاکستانی دہشت گردی کا شکار ہوگا

مسعود اظہر معاملہ میں رخنہ اندازی کی بھاری قیمت چکانی پڑے گی : وی کے سنگھ
گورکھپور ۔ 5 اپریل ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) اقوام متحدہ میں جیش محمد سربراہ مسعود اظہر کو دہشت گرد قرار دینے ہندوستان کی کوششوں میں چین کی رخنہ اندازی پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے مرکزی وزیر وی کے سنگھ نے خبردار کیا کہ وہ دن دور نہیں جب چین کو اس کی بھاری قیمت چکانی پڑے گی اور خود وہ پاکستانی پشت پناہی کی حامل دہشت گردی کا شکار ہوگا ۔ انھوں نے کل رات یہاں ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ چین اور پاکستان کے مابین دوستی بے حد مضبوط نظر آتی ہے لیکن وہ دن دور نہیں جب چین بھی پاکستانی پشت پناہی کی حامل دہشت گردی کا شکار ہوگا ۔ جب ایسی صورتحال پیدا ہوجائے تب چین کو بھاری قیمت ادا کرنی پڑے گی ۔ مملکتی وزیر خارجہ نے کہاکہ چین کی ڈپلومیسی میں پاکستان کا اہم مقام ہے ۔ مسعود اظہر کے معاملہ میں چین کی مداخلت کو اسی تناظر میں دیکھنا جانا چاہئے ۔ پٹھان کوٹ پر 2 جنوری کو ہوئے حملہ کے بعد ہندوستان نے فروری میں اقوام متحدہ کو مکتوب روانہ کرتے ہوئے مسعود اظہر کو القاعدہ تحدیدات کمیٹی کے تحت دہشت گرد قرار دینے کیلئے فوری کارروائی پر زور دیا تھا ۔ انسداد دہشت گردی ایکزیکٹیو ڈائرکٹوریٹ نے ہندوستان کی اس درخواست پر غور کرتے ہوئے فراہم شواہد کے تکنیکی پہلوؤں کا جائزہ لینا شروع کردیا تھا ۔

اس کے بعد تکنیکی ٹیم نے اسے امریکہ ، برطانیہ اور فرانس کی مدد سے تمام ارکان کو راونہ کیا ۔ قطعی وقت ہونے سے عین قبل چین نے کمیٹی سے درخواست کی کہ اس سلسلہ کو فی الحال معرض التواء رکھے ۔ چین کے اقوام متحدہ میں مستقل نمائندہ نے کہا کہ مسعود اظہر سلامتی کونسل کی درکار شرائط پر پورا نہیں اُترے جس کے ذریعہ انھیں اقوام متحدہ دہشت گرد قرار دے ۔ جموںو کشمیر میں بی جے پی۔ پی ڈی پی اتحاد کے بارے میں پوچھے جانے پر کیونکہ اسے موقع پرستانہ اتحاد قرار دیا جارہا ہے ، وی کے سنگھ نے کہاکہ ماضی میں پی ڈی پی نے کانگریس سے جو اتحاد کیا تھا کیا وہ درست تھا ؟ انھوں نے کہا کہ دونوں جماعتوں کے سینئر قائدین نے کافی غور و خوص کے بعد یہ فیصلہ کیاہے اور جمہوریت میں اس کی زیادہ اہمیت ہیں ۔ واضح رہے کہ اقوام متحدہ میں جیش محمد سربراہ مسعود اظہر کو عالمی دہشت گرد قرار دینے ہندوستان کی کوششوں کو محض چین کی رخنہ اندازی کی وجہ سے ناکامی کا سامنا کرنا پڑا تھا ۔

TOPPOPULARRECENT