Friday , August 18 2017
Home / Top Stories / ڈاکٹرس کے مشورہ کے بغیر اسقاط حمل کے خلاف انتباہ

ڈاکٹرس کے مشورہ کے بغیر اسقاط حمل کے خلاف انتباہ

حیدرآباد ۔ 11 ۔ جولائی : ( سیاست نیوز) : حمل روکنے یا اسقاط حمل کی ادویات کے استعمال کے بارے میں مختلف انداز میں مہم چلانے کے تلنگانہ کی خواتین پر مثبت اثرات ہوئے ہیں لیکن اب بھی شادی شدہ خواتین میں اسقاط حمل کی گولیاں استعمال کرنے کا رجحان برقرار ہے ۔ تلنگانہ میں کم از کم 39 فیصد خواتین اسقاط حمل کے طریقوں پر عمل کررہی ہیں ۔ قومی تناظر میں دیکھا جائے تو تلنگانہ میں 94 فیصد شادی شدہ اسقاط حمل کے طریقے جانتی ہیں اور 50 فیصد سے زائد خواتین ان طریقوں کا استعمال کرتی ہیں ۔ تلنگانہ میں ایک طرف اسقاط حمل کا رجحان ہے تو دوسری طرف پہلی اور دوسری زچگی میں وقفہ نہیں دیا جارہا ہے ۔ سال بہ سال زچگی کا رجحان ہے ۔ دوسری ریاستوں کی بہ نسبت تلنگانہ کی شادی شدہ خواتین میں حمل روکنے کا رجحان بہت کم ہے ۔ ڈاکٹرس کا کہنا ہے کہ نوجوان خواتین اسقاط حمل کی گولیوں کا بیجا استعمال کررہی ہیں جس کی وجہ سے صحت خراب ہورہی ہے ۔ اسقاط حمل کی گولیاں ڈاکٹرس کے مشورہ سے استعمال کرنے کی تاکید کی گئی ہے ۔ بعض خواتین حمل روکنے کے لیے جڑی بوٹیاں استعمال کرتی ہیں ۔۔

TOPPOPULARRECENT