Tuesday , September 19 2017
Home / شہر کی خبریں / ڈاکٹرس کے معزز پیشہ کو کمرشیل بنانے پر اظہارتشویش

ڈاکٹرس کے معزز پیشہ کو کمرشیل بنانے پر اظہارتشویش

ورلڈ ڈاکٹرس ڈے تقریب، جسٹس رمن اور دیگر کا خطاب
حیدرآباد۔یکم جولائی(سیاست نیوز) سروجنی نائیڈو مہاودیالیا اور تلنگانہ سٹیزنکونسل کے زیراہتمام نمائش میدان آڈیٹوریم میں قومی یوم ڈاکٹرس منعقد کیا گیا۔ جسٹس رمن نگرانی کی۔ اس تقریب میںجسٹس اسماعیل احمد اور ڈاکٹر پرشتم ریڈی نے مہمانِ خصوصی کی حیثیت سے شرکت کی ۔ اس موقع پر جسٹس رمن نے قومی سطح پر شعبہ طب میںتیزی کیساتھ بڑھتی لاپراہیوں اور طب کے معزز پیشے کو کمرشیل طور پر استعمال کرنے کے بڑھتے رحجان پر تاسف کا اظہار کیا۔انہوں نے کہاکہ پہلے کے دور میںڈاکٹرس اپنے مریض کے علاج کے علاوہ اس کے گھریلو تنازعات کو بھی حل کرنے میںمددگار رہتا تھا ۔مگر اب اس کو پیسہ کمانے کا ذریعہ بناکر بدنام کردیاجارہا ہے۔ جہاں پر علاج مہنگا ہورہا ہے وہیں پر ڈاکٹر س کی تشخیص کی فیس اور طریقہ کار میں بھی بڑے پیمانے پر تبدیلیاں پیش آرہی ہیں۔جسٹس اسماعیل نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے موجودہ دور کے طریقہ تشخیص اور علاج پر خرچ ہونے والی رقم کو قابل افسوس قراردیا۔ ڈاکٹر پرشتم ریڈی نے کہا کہ ہمارے پاس ایسے ڈاکٹرس بھی ہیںجو اپنے پیشے میںماہر ہونے کے باوجود اپنا مادر وطن چھوڑ کر جانے سے صاف انکار کردیا اوریہاں پر لوگوں کی تشخیص کو ترجیح دی حالانکہ انہیںامریکہ اور دیگر ممالک میںاپنے اس پیشے میںمہارت کا بڑا معاوضہ مل سکتا تھا۔ انہوں نے کہاکہ ایسے ہی تین ڈاکٹرس کوتلنگانہ سٹیزن کونسل اور سروجنی نائیڈو مہاودیالیا کی جانب سے آج تہنیت پیش کی جارہی ہے ۔ اس موقع پر مذکورہ کالج کی طالبات نے ڈاکٹرس کی اہمیت او رافادیت پر تقریریں کیں۔

TOPPOPULARRECENT