Sunday , August 20 2017
Home / ہندوستان / ڈاکٹر عبدالکلام کو قوم کا خراج ، پہلی برسی پر یادگار مجسمہ کی نقاب کشائی

ڈاکٹر عبدالکلام کو قوم کا خراج ، پہلی برسی پر یادگار مجسمہ کی نقاب کشائی

آبائی وطن رامیشورم کو ’’امروت‘‘کے تحت ترقی دینے وزیراعظم نریندر مودی کا اعلان
رامیشورم۔ 27 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) سابق صدرجمہوریہ ڈاکٹر اے پی جے عبدالکلام کو آج قوم نے خراج عقیدت پیش کیا۔ ان کی پہلی برسی کے موقع پر بطور یادگار ایک قد آدم مجسمہ کی نقاب کشائی عمل میں لائی گئی جبکہ مرکز نے ڈاکٹر کلام کے آبائی وطن مہیشورم کو ’’امروت‘‘(AMRUT)  کے تحت ترقی دینے کے ٹاؤنس میں شامل کرنے کا اعلان کیا تاکہ سابق صدرجمہوریہ ’’عوامی صدر‘‘ کو خراج پیش کیا جاسکے۔ وزیراعظم مودی نے کہا کہ ڈاکٹر کلام نے جو خلا چھوڑا، اس کو کوئی بھی پُر نہیں کرسکتا۔ مرکزی وزیر شہری ترقی ایم وینکیا نائیڈو نے بھی انہیں خراج پیش کیا۔ ڈاکٹر کلام کے آبائی ٹاؤن کو اٹل مشن برائے ری جنویشن اینڈ اربن ٹرانسفرمیشن (AMRUT)کے تحت شامل کرنے کا اعلان بھی کیا گیا۔ اس پالیسی میں جو ضوابط و شرائط رکھے گئے ہیں، اس میں ترقی لائی گئی ہے۔ ڈاکٹر کلام کو زبردست خراج پیش کرتے ہوئے وزارت دفاع کی جانب سے یہاں کثیر الاجتماع کے ساتھ جلسہ منعقد کیا۔ ڈیفنس ریسرچ اینڈ ڈیولپمنٹ آرگنائزیشن کے زیراہتمام منعقدہ جلسہ میں ڈاکٹر کلام کی خدمات کو یاد کیا گیا۔ ڈاکٹر کلام اس آرگنائزیشن سے طویل مدت تک وابستہ تھے۔ وزیر دفاع منوہر پاریکر اور مملکتی وزیر روڈ ٹرانسپورٹ و قومی شاہراہیں پی رادھا کرشنن بھی ڈاکٹر کلام کو خراج پیش کرنے والوں میں شامل تھے۔ اس موقع پر وینکیا نائیڈو نے ڈاکٹر کلام کے قد آدم مجسمہ کی نقاب کشائی انجام دی۔ وزیراعظم نریندر مودی نے ٹوئٹر پر لکھا کہ ہمیں اپنے محبوب صدر ڈاکٹر اے پی جے عبدالکلام سے بچھڑ کر ایک سال ہوا ہے۔ انہوں نے جو خلاء چھوڑا اور جو خدمات ہمیں دی ہیں، اس کو کوئی دوسرا پورا نہیں کرسکتا۔ اس عظیم شخصیت کو میرا خراج پیش ہے۔ ڈاکٹر کلام ہمارے دلوں میں ہمیشہ رہیں گے

اور ان کی سوچ اور تعلیمات ہمارے لئے مشعل راہ ہوگی۔ اس ٹاؤن کو امروت کے تحت شامل کرنے مرکز کے فیصلہ پر انہوں نے کہا کہ جن شہروں کی آبادی ایک لاکھ سے زائد ہے، ان کو ترقی دی جانے کی پالیسی بنائی گئی تھی لیکن اس شہر رامیشورم کے لئے اس پالیسی میں ترمیم کی جاتی ہے۔ وزیراعظم مودی نے ڈاکٹر کلام کو خراج پیش کرنے کے لئے 45 ہزار نفوس پر مشتمل اس ٹاؤن رامیشورم کو امروت کے تحت ترقی دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ وینکیا نائیڈو نے کہا کہ مرکز نے رامیشورم کی ترقی کے لئے 48 کروڑ روپئے کے پراجیکٹس کو منظوری دی ہے۔ اس کے تحت 45 کروڑ روپئے سیوریج نیٹ ورکس کے لئے استعمال کئے جائیں گے اور ماباقی رقم پارکس اور کھلی جگہ کو فروغ دینے پر خرچ کی جائے گی۔ چیف منسٹر ٹاملناڈو جیہ للیتا کا شکریہ ادا کرتے ہوئے وینکیا نائیڈو نے کہا کہ چیف منسٹر نے ڈاکٹر کلام کی یادگار تعمیر کرنے کیلئے اراضی الاٹ کی ہے۔

TOPPOPULARRECENT