Wednesday , September 20 2017
Home / ہندوستان / ڈوکلام آخری مسئلہ نہیں تھا ‘ فوجی چوکسی برقرار

ڈوکلام آخری مسئلہ نہیں تھا ‘ فوجی چوکسی برقرار

بھوپال 14 ستمبر ( سیاست ڈاٹ کام ) ڈوکلام اپنی نوعیت کا کوئی آخری مسئلہ نہیں تھا اور چونکہ اسے حل کردیا گیا ہے اس کے باوجود فوج اپنی چوکسی میں کمی نہیںکرسکتی ۔ جنرل آفیسر کمانڈنگ ان چیف سدرن کمانڈ ( پونے ) لیفٹننٹ جنرل پی ایم ہارز نے یہ بات کہی ۔ انہوں نے کہا کہ ہماری ٹریننگ اور تیاری ہنوز برقرار ہے ۔ ڈوکلام مسئلہ حل کرلیا گیا ہے اس کا یہ مطلب نہیں ہے کہ ہم اپنی چوکسی کو ختم کردیں۔ لیفٹننٹ جنرل ہارز یہاں سدرن کمان کی جانب سے بہادری اور بہترین خدمات کے عوض 63 ایوارڈز دینے کے بعد اخباری نمائندوں سے بات چیت کر رہے تھے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے اپنی چوکسی کو ختم نہیں کیا ہے ۔ ہم اب بھی چوکس ہیں اور ہم اس بات کو یقینی بنا رہے ہیں کہ ہم ہر وقت تیار اور چوکس رہیں۔ انہوں نے کہا کہ فوج ہمیشہ تیاری کی حالت میں رہتی ہے اور جب کبھی ضروری ہو وہ دشمن کو منہ توڑ جواب دینے بڑی تیزی سے مورچے سنبھال سکتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ حال ہی میں ڈوکلام میں ایک مسئلہ ہوا تھا جسے حل کرلیا گیا ہے ۔ لیکن اس کا یہ مطلب نہیں ہے کہ یہ کوئی آخری مسئلہ تھا ۔

TOPPOPULARRECENT