Tuesday , October 24 2017
Home / دنیا / ڈوکلام تنازعہ ‘ ہند ۔ چین مسئلہ کی یکسوئی کریں

ڈوکلام تنازعہ ‘ ہند ۔ چین مسئلہ کی یکسوئی کریں

سفارتی راستہ اختیار کرنے پر زور ۔ اعلی امریکی کمانڈر کا بیان
واشنگٹن 12 اگسٹ ( سیاست ڈاٹ کام ) ہندوستان اور چین کے مابین سکم سیکشن میں جو تعطل پیدا ہوا ہے وہ باعث تشویش ہے ۔ ایک اعلی امریکی کمانڈر نے اس خیال کا اظہار کیا ہے اور فریقین سے کہا ہے کہ وہ اس مسئلہ کو سفارتی طور پر حل کرنے کیلئے مل کر کام کریں۔ ہندوستان اور چین کے مابین ڈوکلام علاقہ میں زائد از 50 دن سے تعطل چلا آ رہا ہے کیونکہ یہاں ہندوستانی افواج نے چین کی پیپلز لبریشن آرمی کو اس علاقہ میں ایک سڑک تعمیر کرنے سے روک دیا ہے ۔ کمانڈر امریکی پیسیفک کمان ایڈمیرل ہیری بی ہیرس نے اسٹیٹ ڈپارٹمنٹ کے خیالات کا اظہار کیا اور کہا کہ امریکہ دونوں ملکوں کی حوصلہ افزائی کرتا ہے کہ وہ اپنے اختلافات کا سفارتی طور پر حل دریافت کرلیں۔ انہوں نے ڈوکلام مسئلہ پر سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ وہ سمجھتے ہیں کہ کسی بھی وقت میں اگر دو بڑی طاقتیں مشترکہ سرحد پر نبرد آزما ہوتی ہیں تو یہ تشویش کی بات ہے ۔ یقینی طور پر یہ خطرناک ہے ۔ انہوں نے تاہم کہا کہ میں سمجھتا ہوں کہ ہماری حکومت کے قائدین کا جو احساس ہے امریکہ کی قومی قیادت کا جو احساس ہے وہ یہ کہ دونوں ہی ممالک ہندوستان اور چین کو چاہئے کہ وہ اس مسئلہ کی یکسوئی کیلئے سفارتی سطح پر کوشش کریںتاکہ کشیدگی میں کمی ہوسکے ۔
اس سوال پر کہ آیا چین ‘ ڈوکلام مسئلہ میں بھی ساؤتھ چائنا سی میں اختیار کئے گئے طرز عمل ہی کو دہرا رہا ہے تاکہ یہاں کی ہئیت میں تبدیلی آسکے تو انہوں نے کہا کہ اس تعلق سے کوئی رائے ظاہر کرنا ہندوستان کا کام ہے ۔ وہ ہندوستان کی ترجمانی کرنا نہیں چاہتے اور نہ ہی وہ یہ قیاس کرنا چاہتے ہیں کہ اس مسئلہ پر کیا کچھ ہوسکتا ہے ۔ وہ سمجھتے ہیں کہ اس تنازعہ پر دونوں ملکوں کو مل کر کام کرنا چاہئے ۔

TOPPOPULARRECENT