Wednesday , September 20 2017
Home / ہندوستان / ڈکیتی کے الزام میں آسام رائفلز کا کمانڈنٹ گرفتار 14.5 کروڑ روپئے مالیتی طلائی بسکٹ لوٹنے کا انکشاف

ڈکیتی کے الزام میں آسام رائفلز کا کمانڈنٹ گرفتار 14.5 کروڑ روپئے مالیتی طلائی بسکٹ لوٹنے کا انکشاف

ایزوال۔/5مئی، ( سیاست ڈاٹ کام ) آسام رائفلز 39 ویں بٹالین کے کمانڈنٹ کرنل جسجیت سنگھ کو آج پولیس نے ایزوال میں گرفتار کرلیا ہے جن پر مینمار سے اسمگل کئے گئے 14.5 کروڑ کے مالیتی طلائی بسکٹس ایک قومی شاہراہ سے لوٹنے کی سازش کا الزام ہے۔ پولیس نے الزام عائد کیا کہ جسجیت سنگھ نے اپنے آدمیوں ( ماتحت اہلکاروں ) کو حکم دیا تھا کہ شہر ایزوال کے مضافات میں غیر قانونی طریقہ سے منتقل کئے جانے والے طلائی بسکٹس کو لوٹ لیں یہ واقعہ گزّتہ سال 14ڈسمبر کی شب پیش آیا تھا۔ تاہم یہ واقعہ اسوقت منظر عام پر آیا جب گاڑی کے ڈرائیور نے 31اپریل کو ایزوال پولیس اسٹیشن میں ایف آئی آر درج کروائی اور یہ الزام عائد کیا کہ آسام رائفلز کے مسلح جوانوں نے اس کی گاڑی کو روک لیا اور 52طلائی بسکٹس لوٹ لئے تھے۔ اس نے یہ بھی شکایت کی ہے کہ حملہ آوروں نے بندوق کی نوک پر اپنی زبان بند رکھنے کی دھمکی دی تھی لیکن دوستوں کی ترغیب پر اس نے پولیس کو اطلاع دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ مذکورہ ڈکیتی میں ملوث آسام رائفلز کے 8جوان جو کہ پولیس کی حراست میں ہیں پوچھ تاچھ کے دوران یہ انکشاف کیا کہ بٹالین کمانڈنٹ کے حکم پر انہوں نے جرم کا ارتکاب کیا تھا۔ پولیس کی جانب سے گرفتاری کے بعد کمانڈر جسجیت سنگھ کو خدمات سے معطل کردیا گیا۔ پولیس نے اس کیس میں 4افراد بشمول ایک طلباء لیڈر اور تاجر کو گرفتار کرلیا ہے جوکہ عدالتی تحویل میں ہیں۔

TOPPOPULARRECENT